Aaj TV News

BR100 4,847 Decreased By ▼ -5 (-0.09%)
BR30 25,752 Increased By ▲ 81 (0.31%)
KSE100 45,112 Decreased By ▼ -75 (-0.17%)
KSE30 18,483 Decreased By ▼ -2 (-0.01%)
COVID-19 TOTAL DAILY
CASES 725,602 4584
DEATHS 15,501 58
Sindh 269,126 Cases
Punjab 250,459 Cases
Balochistan 20,321 Cases
Islamabad 66,380 Cases
KP 99,595 Cases

ترجمان پاک فوج میجر جنرل بابر افتخار کہتے ہیں احسان اللہ احسان کے فرار کے ذمہ دار فوجی افسران کے خلاف کارروائی کی جاچکی ہے۔احسان اللہ احسان کو دوبارہ گرفتار کرنے کی کوششیں بھی جاری ہیں۔

ڈی جی آئی ایس پی آرنےغیرملکی میڈیاکےنمائندوں سےگفتگومیں کہاجس ٹوئٹراکاؤنٹ سےملالہ یوسفزئی کودھمکی دی گئی وہ ایک جعلی اکاؤنٹ تھا۔بلوچستان میں11کان کنوں کےقتل سےتعلق کی بناپراہم گرفتاریاں کی ہیں۔شمالی وزیرستان میں خواتین کوقتل کرنےوالےدہشتگردوں کابھی جلد خاتمہ کردیا جائے گا۔

ان کا کہنا تھا کہ بھارت پاکستان مخالف شدت پسندوں کی مدد کررہا ہے اوراس کاعلم افغان انٹیلیجنس کو بھی ہے۔

میجر جنرل بابر افتخار نے کہا لاپتہ افراد کے معاملے پرکمیشن نےبہت پیشرفت کی ہے۔یہ معاملہ بہت جلد حل ہو جائے گا۔

ڈی جی آئی ایس پی آرنےبتایاگزشتہ ماہ بلوچستان کے علاقے کیچ میں ہزارہ برادری کے گیارہ کان کنوں کے قتل میں ملوث اہم ملزمان کو گرفتار کیا گیا ہے۔

انہوں نےبتایاسیکیورٹی فورسز بچے کچے دہشتگردوں کیخلاف جارحانہ کارروائیاں کررہی ہیں۔انہی کارروائیوں پر شدت پسندوں کی طرف سے ردعمل بھی آتا ہے۔گزشتہ دنوں خواتین کی کار پر حملہ اسی سلسلے کی ایک کڑی تھی۔

میجر جنرل بابر افتخار نے کہا پاکستان میں شدت پسندوں کی مدد افغانستان سے کی جارہی ہے۔جہاں بھارت ان تنظیموں کو ناصرف اسلحہ اور پیسے دے رہا ہے بلکہ نئی ٹیکنالوجی سے بھی نواز رہا ہے۔

ڈی جی آئی ایس پی آر کا کہنا تھا پاکستان ہرقیمت پرافغانستان میں امن چاہتاہےاوراس سلسلےمیں جوکچھ ہوسکتاتھا وہ پاکستان کرچکاہے۔

واضح کیاکہ یہ ہرگزممکن نہیں کہ کابل پرطالبان دوبارہ سے قابض ہوں اور پاکستان ان کی حمایت کرے۔