Aaj TV News

BR100 4,846 Increased By ▲ 46 (0.97%)
BR30 24,817 Increased By ▲ 124 (0.5%)
KSE100 45,175 Increased By ▲ 231 (0.51%)
KSE30 18,470 Increased By ▲ 87 (0.47%)
COVID-19 TOTAL DAILY
CASES 854,240 4109
DEATHS 18,797 120
Sindh 290,756 Cases
Punjab 316,334 Cases
Balochistan 23,186 Cases
Islamabad 77,684 Cases
KP 123,150 Cases

وزیرخزانہ شوکت ترین کا کہنا ہے کہ پاکستان نےآئی ایم ایف کےساتھ بہت سخت معاہدے کیے ہیں تاہم آئی ایم ایف نےہمارے ساتھ کچھ زیادتیاں کیں جن کیلئےہمیں کھڑاہونا ہوگا دیکھنا چاہیئےآئی ایم ایف سےکیا ریلیف مل سکتا ہے،مہنگائی بڑھ رہی ہے۔

قومی اسمبلی کی قائمہ کمیٹی برائے خزانہ کے اجلاس میں وزیرخزانہ شوکت ترین نے شرکت کی ، بجٹ اسٹریٹیجی پیپرپربریفنگ دیتے ہوئے وزیرخزانہ نے کہاکہ آئندہ سالوں میں4 سے5فیصد گروتھ بھی ناکافی ہوگی۔

ان کا کہنا تھا کہ پاکستان نےآئی ایم ایف کےساتھ بہت سخت معاہدے کیے ہیںآئی ایم ایف سےبات چیت کررہے ہیں دیکھنا چاہیئےآئی ایم ایف سےکیا ریلیف مل سکتاہے۔

وزیرخزانہ نےکہاکہ گزشتہ10سالوں میں ایف بی آرنےہراساں کیا وزیرخزانہ کےساتھ یہ برتاؤہوا توعام آدمی کےساتھ کیاہوتا ہوگا، ٹیکس نیٹ بڑھانےپرہی ہراساں کرنے کا سلسلہ بند ہوگا۔

انہوں نےکہاکہ معیشت میں استحکام نہیں ہے،قیمتوں کےتوازن اورزراعت پرتوجہ دینی ہوگی،ہاوسنگ سیکٹرپربھی توجہ کابھی بہت فائدہ ہوگا۔

انہوں نےکہاکہ پاکستان میں بنکنگ سیکٹرکاعمل دخل صرف33 فیصد ہےقرضوں کی مینیجمنٹ کرنےکی ضرورت ہے پسماندہ علاقوں کوپیسہ دیںگے۔