Aaj News

کراچی کو 4 روز میں صاف کرنے کا حکم, گندگی پر وزیراعلیٰ سندھ برہم

کے ایم سی اور کینٹونمنٹ کو اگلے ہفتے تک اختیارات سے متعلق مسائل حل کرنے کی ہدایت
شائع 24 نومبر 2023 01:32pm
نگراں وزیراعلیٰ سندھ جسٹس (ر) مقبول باقر۔ فوٹو — فائل
نگراں وزیراعلیٰ سندھ جسٹس (ر) مقبول باقر۔ فوٹو — فائل

نگراں وزیراعلیٰ سندھ جسٹس (ر) مقبول باقر نے سولڈ ویسٹ مینجمنٹ بورڈ کو چار روز میں کراچی صاف کرکے رپورٹ پیش کرنے کا حکم دے دیا۔

کراچی میں جسٹس (ر) مقبول باقر کی زیر صدارت تمام سوک ایجنسیز کا اجلاس ہوا جس میں وزیراعلیٰ نے شہر میں صفائی کے ناقص انتظامات پر برہمی کا اظہار کیا۔

اس موقع پر نگراں وزیراعلیٰ نے کہا کہ تمام اداروں کو ہدایات کے باوجود کراچی کی حالت بہترنہیں ہوئی، شہرکی صفائی نہیں، گٹرابل رہے ہیں، پہلے شہر کے مسائل تو حل کریں۔

مقبول بار نے سولڈ ویسٹ مینجمنٹ بورڈ کے کام پر ناراضگی کا اظہار کرتے ہوئے 4 روز میں شہر صاف کرکے رپورٹ دینے کا حکم دیا۔

کراچی میں ہر طرف گندگی ہے، اب کسی کو معاف نہیں کروں گا، مقبول باقر

نگراں وزیراعلیٰ کا کہنا تھا کہ صفائی کا کام کرنے والی کمپنیوں کو عوام کا پیسہ دیتے ہیں، کمپنیوں سے کام لینا سولڈ ویسٹ اور ٹاؤنز کا کام ہے، کراچی میں ہر طرف گندگی ہے، لہٰذا اب کسی صورت معاف نہیں کروں گا۔

اجلاس میں واٹر بورڈ کے چیف ایگزیکٹو آفسر اسد اللہ نے وزیراعلیٰ کو بریفنگ دیتے ہوئے بتایا کہ اسکیم 33 اور اورنگی کے علائقوں میں نکاسی کا نظام نہیں، چھوٹے پلاٹوں پر بنے رہائشی ٹاورز کے گٹر ابلتے ہیں، صفائی ستھرائی و نکاسی کے مسائل حل کرنا سولڈ ویسٹ اور کینٹونمنٹ بورڈ کا کام ہے۔

نگراں وزیراعلیٰ نے کہا کہ کراچی میٹروپولیٹن کارپوریشن (کے ایم سی) اور کینٹونمنٹ اگلے ہفتے اپنے اختیارات سے متعلق مسائل حل کریں۔

شہر میں 3 لاکھ گٹر ہیں، انکے ڈھکن فائبر کے بنانا شروع کیے ہیں، میئر کراچی

میئر کراچی مرتضیٰ وہاب نے اجلاس کے شرکاء کو آگاہ کیا کہ شہر میں 3 لاکھ گٹر اور مین ہولز ہیں، گٹرز کے ڈھکنے اب فائبر کے بنانا شروع کے ہیں جو چوری نہیں ہوں گے۔

مرتضیٰ وہاب نے کہا کہ نیا ناظم آباد - بنارس سڑک کی استرکاری کا فیصلہ کیا ہے، سڑک پر نکاسی کی لائنیں بھی بچھائی گئی ہیں، وزیراعلیٰ نے میئر کراچی کو سڑک جلد ٹھیک کروانے کی ہدایت کردی۔

karachi

mayor karachi

Caretaker CM Sindh

Justice (Rtd) Maqbool Baqir

Comments are closed on this story.

تبصرے

تبولا

Taboola ads will show in this div