Aaj News

پیر, مارچ 04, 2024  
23 Shaban 1445  

نواز شریف کی تاحیات نااہلی: سپریم کورٹ اپنے فیصلے پر از خود نوٹس لے کر غلطی درست کرے، شاہد خاقان عباسی

یہ فیصلہ عدالتیں نہیں کرسکتیں یہ فیصلہ عوام کرتے ہیں، شاہد خاقان عباسی کی "فیصلہ آپ کا" میں گفتگو
اپ ڈیٹ 28 نومبر 2023 09:36pm
Exclusive interview of Shahid Khaqan - Elections as solutions to problems?| Faisla Aap Ka | Aaj News

سابق وزیراعظم اور مسلم لیگ (ن) کے رہنما شاہد خاقان عباسی نے مطالبہ کیا ہے کہ سپریم کورٹ نےنواز شریف کو تاحیات نااہل قرار دیا ہے، سپریم کورٹ اپنی غلطی درست کرلے تو ان کی عزت میں اضافہ ہوگا، ،،سپریم کورٹ چاہے تو اپنے فیصلے پر از خود نوٹس لے کر اپنی غلطی درست کرے، سپریم کورٹ چاہے تو ایک دن میں فیصلہ سناسکتی ہے۔

آج نیوز کے پروگرام ”فیصلہ آپ کا“ میں خصوصی گفتگو کرتے ہوئے شاہد خاقان عباسی نے کہا کہ سیاسی لیڈر کا فیصلہ عوام کرتے ہیں، سپریم کورٹ نے جس طرح نواز شریف کو ڈی سیٹ کیا، کیا یہ درست فیصلہ تھا؟

انہوں نے کہا کہ ’میں تو آج چاہتا ہوں اس ملک کا سپریم کورٹ یہ کہے کہ یہ غلط فیصلہ تھا، ختم کریں ان چیزوں کو‘۔

انہوں نے سوال کیا کہ ’تاحیات نااہل کونسے قانون کے تحت کیا جاتا ہے؟ صادق امین کا سرٹیفکیٹ جاری کرنے کا اختیار کا سپریم کورٹ کو ہے؟ اس کے بعد آپ نے قانون میں ایسی ترمیم کی کہ آپ کوئی سیاسی عہدہ بھی نہیں دے سکتے‘۔

ان کا کہنا تھا کہ ’یہ فیصلہ عدالتیں نہیں کرسکتیں یہ فیصلہ عوام کرتے ہیں‘۔

انہوں نے کہا کہ یہ فیصلے عوام پر چھوڑ دیں کہ کون نااہل ہے کون نہیں ہے، کس کو عوام چاہتے ہیں کس کو نہیں چاہتے۔

شاہد خاقان عباسی نے عمران خان کے حوالے سے کہا کہ اگر ان کی سزا معطل ہوچکی ہے تو وہ پارٹی کے چئیرمین بن سکتے ہیں۔

ایک سوال کے جواب میں ان کا کہنا تھا کہ قانون میں نہیں ہے کہ ایک عدالت کلی اختیارات حاصل کرلے۔

انہوں نے پوچھا کیا اپیل کا حق آئین کا حصہ ہے یا نہیں؟ نواز شریف کس قانون کے تحت اپیل لے کر جائیں گے کہ انہیں نااہل کیا گیا۔ ’وہ فیصلہ فائنل ہوچکا ہے، اس میں کوئی اپیل ہی نہیں تھی، اب سپریم کورٹ ہی اپنے اس فیصلے کو ریویو (نظر ثانی) کرسکتا ہے، سوموٹو پاور تو انہوں نے رکھی ہوئی ہے، کریں ان فیصلوں کو درست کریں ان فیصلوں کو‘۔

شاہد خاقان عباسی نے کہا کہ ’میں یہ کہتا ہوں سپریم کورٹ خود اپنی ساکھ بحال کرے، وہاں جج موجود ہیں کیا وہ فیصلے پڑھتے نہیں ہیں؟ ان کو پتا نہیں ہے کہ فیصلے کیا ہیں؟ ان کو پتا نہیں ہے کہ فیصلے غلط ہیں؟‘

ان کا کہنا تھا کہ عدالتوں نے فیصلے کیے ہیں اس سے پہلے بھی کیے ہیں ، فیصلے کریں تاکہ یہ عمل آئندہ نہ ہو، ورنہ کل کسی اور کو نااہل کردیا جائے گا۔

انہوں نے کہا کہ سپریم کورٹ نے نواز شریف کو تاحیات نااہل کیا ہے، اس کو سپریم کورٹ ہی درست کرے گا، اس کو درست کرنا چاہیے، تاحیات نااہلی کی گنجائش نہیں ہے ہمارے قانون کے اندر’۔

شاہد خاقان عباسی نے کہا کہ اگر سپریم کورٹ اس پر خود نظر ثانی کرلے تو ان کی عزت میں اضافہ ہوگا کہ انہوں نے اپنی غلطی کی درستگی کی ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ اس میں کوئی وقت نہیں لگتا ایک منٹ کی بات ہے، انہوں نے ایک دن میں فیصلہ کرکے پورے ٹائم ٹیبل دیے ہیں۔

الیکشن کے حوالے سے گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ کسی کے چاہنے سے نہیں، آئین کے مطابق انتخابات ہوتےہیں، کسی کے چاہنے پر الیکشن کرانے ہیں تو بہتر ہے کہ نہ کرائیں۔

شاہد خاقان عباسی نے کہا کہ خیبرپختونخوا، بلوچستان اور پنجاب کے بہت سے حلقے سردی سے متاثر ہوں گے، ان حالات میں الیکشن ہوئے تو بہت سے لوگ ووٹ کے حق سے محروم ہوجائیں گے۔

ان کا کہنا تھا کہ سپریم کورٹ چاہے تو ایک ماہ کیلئے الیکشن آگے کرسکتی ہے۔

Nawaz Sharif

Shahid Khaqan Abbasi

SUPREME COURT OF PAKISTAN (SCP)

Comments are closed on this story.

تبصرے

تبولا

Taboola ads will show in this div