Aaj TV News

BR100 4,678 Decreased By ▼ -9 (-0.18%)
BR30 18,623 Decreased By ▼ -17 (-0.09%)
KSE100 45,507 Decreased By ▼ -105 (-0.23%)
KSE30 17,926 Decreased By ▼ -16 (-0.09%)
COVID-19 TOTAL DAILY
CASES 1,338,993 5,472
DEATHS 29,037 8
Sindh 509,308 Cases
Punjab 455,499 Cases
Balochistan 33,744 Cases
Islamabad 112,557 Cases
KP 182,619 Cases

دوسری عالمی جنگ کے دوران جاپانی وزیراعظم ہدیکی توجو کی کو جنگی جرائم کا مرتکب قرار دے کر پھانسی دیدی گئی تھی، تاہم ان کی باقیات کا مقام ایک معمہ تھا۔

لیکن امریکی فوج کی خفیہ دستاویزات کے ذریعے اس سوال کا جواب بھی مل گیا ہے۔ جن میں بتایا گیا ہے کہ امریکی بندرگاہ پرل ہاربر پر حملے کے ماسٹر مائنڈ کہلانے والے جاپانی وزیراعظم توجو کی راکھ کو ایک امریکی جنگی طیارے کے ذریعے بحرالکاہل میں پھینکا گیا تھا۔

امریکی خفیہ دستاویزات کے مطابق توجو کی باقیات کو ایک انتہائی خفیہ مشن کے ذریعے جاپانی شہر یوکوہاما کے ساحل سے تین میل دور سمندر میں گرایا گیا تھا۔ یہ بات اہم ہے کہ توجو کے علاوہ چھ دیگر جاپانی حکام کو 1948 میں کرسمس سے عین قبل جنگی جرائم کے الزامات کے تحت پھانسی دی گئی تھی۔

انتہائی قوم پرست جاپانی توجو کی موت کو شہادت میں ڈھال کر ہمیشہ کیلئے یادگار بنانے کے درپے تھے۔ یہ دریافت جاپانی تاریخ کے ایک تکلیف دہ باب کو جزوی طور پر بند کر رہی ہے۔