Aaj News

پریانتھا قتل کیس: ملزمان کی حمایت کرنے والے شخص کو قید اور جرمانے کی سزا

گوجرانولہ : انسداد دہشت گردی کی عدالت نے سری لنکن شہری پریانتھا...
شائع 21 جنوری 2022 03:42pm

گوجرانولہ : انسداد دہشت گردی کی عدالت نے سری لنکن شہری پریانتھا کمارا قتل کیس میں ملزمان کی حمایت کرنے والے ایک شخص کو ایک سال قید اور10 ہزارروپے جرمانے کی سزا سنادی۔

گوجرانوالہ کی انسداد دہشت گردی کی عدالت میں سیالکوٹ میں مشتعل ہجوم کے ہاتھوں بے دردی سے قتل ہونے والے سری لنکن فیکٹری منیجرپریانتھاکماراقتل کیس کی سماعت ہوئی ۔

عدالت نے جرم ثابت ہونے پر کیس کے پہلے ملزم کوسزا سنادی،ملزم عدنان نے عدالت میں اپنے جرم کا اعتراف کیا ، جس پر جج نے ملزم کو ایک سال قید اور10 ہزارروپےجرمانے کی سزا سنائی۔

ملزم عدنان نے سری لنکن شہری کے قتل کو درست قرار دیتے ہوئے اپنے یو ٹیوب چینل پر اس کی تشہیر کرتے ہوئے ایسے درست عمل قرار دیا تھاجس پر تھانہ رنگپور سیالکوٹ میں مقدمہ درج کیا گیا ہے۔

واضح رہے کہ سیالکوٹ میں واقع لیدر فیکٹری میں کام کرنے والے غیرملکی مینیجر پریانتھا کو ملازمین نے توہین مذہب کا الزام لگا کر بہیمانہ تشدد کا نشانہ بنا کر ہلاک کیا اور پھر لاش کو چوک پر نذر آتش کردیا تھا۔

بعد ازاں پولیس نے سانحہ سیالکوٹ کے ابتدائی چالان میں 85ملزمان کونامزد کیا تھا جبکہ 10 سے 12 مرکزی ملزمان قرار دیئے گئے تھے ، مرکزی ملزمان میں متعدد فیکٹری کے ملازمین شامل ہیں۔

ATC

murder case

Gujranwala

Sri Lankan manager

Priyantha Kumara

Comments are closed on this story.