Aaj News

بدھ, فروری 28, 2024  
18 Shaban 1445  

عمران خان پر قاتلانہ حملے کے ملزمان کا جھوٹ مشین نے پکڑ لیا

مرکزی ملزم نوید اور دیگر دو ساتھیوں کا پولی گرافک ٹیسٹ کروا لیا گیا
اپ ڈیٹ 15 دسمبر 2022 08:37pm
تصویر بزریعہ گیٹی
تصویر بزریعہ گیٹی

چئیرمین پاکستان تحریک انصاف عمران خان پر حملے کے مرکزی ملزم نوید سمیت تین ملزمان کا پولی گرافک ٹیسٹ کروا لیا گیا، جس میں تینوں ملزمان کے بیانات غیر تسلی بخش قرار دے دئیے گئے۔

وزیر آباد میں عمران خان پر ہونے والے قاتلانہ حملے پر مشترکہ تحقیقاتی ٹیم (جے آئی ٹی) کی تحقیقات جاری ہیں۔

پولیس ذرائع کے مطابق مرکزی ملزم نوید اور دیگر دو ساتھیوں کا پولی گرافک ٹیسٹ کروا لیا گیا ہے۔ ٹیسٹ میں تینوں ملزمان اپنے پہلے بیان پر قائم رہے۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ پولی گرافک ٹیسٹ میں تینوں ملزموں کے بیانات غیر تسلی بخش قرار دئیے گئے ہیں، جبکہ تفتیشی ٹیم نے ٹیسٹ کے بعد باقاعدہ میڈیکل بورڈ بنانے کی درخواست کردی ہے۔

پولیس ذرائع کے مطابق میڈیکل بورڈ اور پولی گرافک ٹیسٹ کو تفتیش کا حصہ بنایا جائے گا۔

پولی گرافک ٹیسٹ کیا ہے

پولی گراف، جسے عموماً جھوٹ پکڑنے والا ٹیسٹ بھی کہا جاتا ہے، ایک ایسا آلہ یا طریقہ کار ہے جو کئی جسمانی اشارے جیسے کہ بلڈ پریشر، نبض، سانس، اور جلد کی حرکت کی پیمائش ریکارڈ کرتا ہے۔

اس دوران ملزم سے کچھ سوالات پوچھے جاتے ہیں اور وہ ان کے جوابات دیتا ہے۔

پولی گراف کے استعمال کا عقیدہ یہ ہے کہ جھوٹے جوابات جسمانی ردعمل پیدا کریں گے جو سچ بولنے والے لوگوں سے مختلف ہوسکتے ہیں۔

تاہم، جھوٹ کے ساتھ کوئی خاص جسمانی رد عمل وابستہ نہیں ہیں، جس کی وجہ سے ان عوامل کی نشاندہی کرنا مشکل ہو جاتا ہے جو جھوٹ بولنے والوں کو سچ بولنے والوں سے الگ کرتے ہیں۔

imran khan

Attack on Imran Khan

Politics Dec15 2022

Lie Detector

Polygraph test

Comments are closed on this story.

تبصرے

تبولا

Taboola ads will show in this div