Aaj News

منگل, مئ 28, 2024  
19 Dhul-Qadah 1445  

پروپیگنڈا مہم کیخلاف قانون کے مطابق کارروائی کی جائے گی ، کور کمانڈرز کانفرنس

افغانستان سےسرگرم دہشتگردگروہ علاقائی سلامتی کیلئےخطرہ ہیں،اعلامیہ، افواج کو پوری قوم کی حمایت حاصل ہے، آرمی چیف
اپ ڈیٹ 16 اپريل 2024 08:14pm

آرمی چیف جنرل سید عاصم منیر نے اعلیٰ عسکری حکام کو ہدایت کی ہے کہ وہ ملک میں کسی بھی جگہ سے دہشتگردوں کو فعال ہونے نہ دیں۔

آرمی چیف جنرل سید عاصم منیر کی زیر صدارت 264ویں کور کمانڈر ز کانفرنس میں شرکاء نے مسلح افواج کے افسران، جوانوں اور شہریوں سمیت شہداء کی قربانیوں کو خراجِ تحسین پیش کیا۔

شرکاء کا کہنا تھا کہ شہداء نے ملک میں امن و استحکام کے لئے اپنی جانوں کا نذرانہ پیش کیا۔

کور کمانڈر کانفرنس کے دوران آرمی چیف جنرل عاصم منیر نے انسدادِ دہشتگردی کے خلاف جاری پاک فوج اور قانون نافذ کرنے والے اداروں کی انتھک کوششوں کو سراہا۔

آرمی چیف نے کہا کہ دہشتگردوں کو کسی بھی جگہ سے فعال نہ ہونے دیں۔

انہوں نے کہا کہ مسلح افواج کو پوری قوم کی حمایت حاصل ہے، مسلح افواج دہشتگردی کو ختم کرنے کے لیے پرعزم ہیں۔

فورم نے بشام میں چینی شہریوں پر بزدلانہ دہشت گرد حملے اور بلوچستان میں معصوم شہریوں کے بہیمانہ قتل کی مذمت کی، ساتھ ہی مقبوضہ جموں وکشمیر میں بھارتی جارحیت پر تشویش کا اظہار بھی کیا۔

آئی ایس پی آر کے مطابق فورم نے فلسطینی عوام سے بھی یکجہتی کا اظہار کیا اور غزہ میں انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں، جنگی جرائم اور نسل کشی کی مذمت کی۔

کانفرنس میں بریفنگ کے دوران کہا گیا کہ افغانستان سے سرگرم دہشتگرد گروہ علاقائی سلامتی کیلئے خطرہ ہیں۔

آئی ایس پی آر کے مطابق فورم نے مشرقِ وسطیٰ میں بڑھتی کشیدگی پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہا اگر فریقین نے کشیدگی کم نہ کی تو ایک وسیع علاقائی تنازع جنم لے سکتا ہے۔

فورم نے مسلح افواج کے خلاف مبنی پروپیگنڈا مہم پر بھی تشویش کا اظہار کیا اور کہا کہ اداروں اور سیکیورٹی فورسز پر بے بنیاد الزامات ایک وطیرہ بن چکا ہے، ان الزامات کا مقصد عوام اور مسلح افواج کے درمیان دراڑ ڈالنے کی کوشش ہے۔

شرکاء کا کہنا تھا کہ ہم ایسی کوششوں کو کامیاب نہیں ہونے دیں گے، سازشی عناصرکے خلاف قانون کے مطابق کارروائی کی جائے گی۔

Army Chief General Asim Munir

Corps Commanders conference