Aaj TV News

BR100 4,852 Increased By ▲ 66 (1.37%)
BR30 25,671 Increased By ▲ 691 (2.77%)
KSE100 45,186 Increased By ▲ 445 (0.99%)
KSE30 18,485 Increased By ▲ 153 (0.83%)
COVID-19 TOTAL DAILY
CASES 725,602 4584
DEATHS 15,501 58
Sindh 269,126 Cases
Punjab 250,459 Cases
Balochistan 20,321 Cases
Islamabad 66,380 Cases
KP 99,595 Cases

اسلام آباد:پاکستان اور روس نے دو طرفہ رابطے اور تجارتی تعلقات بڑھانے پر اتفاق کیا ہے، دونوں ممالک اقتصادی تعاون کیلئے بھی پرعزم ہیں۔

روسی وزیر خارجہ سرگئی لارؤف وفد کے ہمراہ وزارت خارجہ پہنچے ، جہاں شاہ محمود قریشی نے معزز مہمان کا استقبال کیا، روسی وزیر خارجہ نے دفترخارجہ میں پودا بھی لگایا۔

وزارتِ خارجہ میں پاکستان اور روس کے درمیان وفود کی سطح پر مذاکرات ہوئے،دونوں ممالک کے وزراء خارجہ نے اپنے اپنے وفد کی قیادت کی۔

مذاکرات میں اقتصادی، تجارتی ودفاعی تعاون کے فروغ پر تفصیلی تبادلہ خیال کیا گیا۔

وزیرخارجہ شاہ محمود قریشی نے کہا کہ روس انسداد دہشتگردی صلاحیت بڑھانے میں تعاون کرے گا، روس کے ساتھ اسٹریم گیس پائپ لائن منصوبے کے جلد آغاز کیلئے پرعزم ہیں، نارتھ ساؤتھ گیس پائپ لائن کی زیادہ رکاوٹیں دور ہو چکیں، جلد کام آگے بڑھے گا، توانائی کی کمی کو پورا کرنے کیلئے روسی تعاون درکار ہے، انسداد دہشتگردی کیلئے ملکرایک دوسرے کے تجربات سے فائدہ اٹھائیں گے۔

روسی وزیر خارجہ نے کہاکہ ہمارے درمیان پاک ایران بھارت پائپ لائن پرکوئی بات نہیں ہوئی، پاک بھارت تعلقات معمول پرآنے کے خواہاں ہیں، باہمی تجارت چالیس فیصد اضافہ سے 790ملین ڈالرز کوپہنچ گئی ہے،مشترکہ فوجی مشقیں بھی ہونے جارہی ہیں۔

افغانستان میں امن وامان کی صورتحال پر تشویش کا اظہارکرتے ہوئے سرگئی لارؤف نے کہاکہ مسئلہ کا حل سیاسی مذاکرات سے ہی ہو سکتا ہے، امریکا خطے کو عدم استحکام کا شکارکرنے کی کوشش کررہا ہے،نئی تقسیم لائنز کے واضح طورُ پر خلاف ہیں۔

روسی وزیرخارجہ نے کہاکہ نارتھ ساؤتھ گیس پائپ لائن کی تعمیراہم ہے، کورونا ویکسین کی پندرہ ہزار ڈوز پاکستان کو فراہم کیں، مزید ڈیڑھ لاکھ فراہم کررہے ہیں۔