Aaj News

سویڈن عام انتخابات: دائیں بازو کی جماعتوں کے حکومتی اتحاد کو شکست

سوشل ڈیموکریٹ حکمرانی کے آٹھ سالہ دور کا خاتمہ...
شائع 12 ستمبر 2022 11:18am

Sweden’s General Elections | Serving parties lost while right-wing won majority of seats | Aaj News

اتوار کو ہونے والے عام انتخابات میں دائیں بازو کی جماعتوں کا حکومتی اتحاد الیکشن ہار گیا اور بائیں بازو کی اپوزیشن جماعتیں الیکشن میں کامیاب ہوگئیں، جس کے ساتھ ہی سوشل ڈیموکریٹ حکمرانی کے آٹھ سالہ دور کا خاتمہ ہوگیا۔

پیر کے اوائل میں، اعداد و شمار نے ظاہر کیا کہ ماڈریٹس، سویڈن ڈیموکریٹس، کرسچن ڈیموکریٹس اور لبرلز نے 349 سیٹوں والی پارلیمنٹ میں 176 سیٹیں جیتی ہیں جب کہ سینٹر لیفٹ کے لیے 173 سیٹیں ہیں۔

امیگریشن مخالف سویڈن ڈیموکریٹس، ماڈریٹس کو سویڈن کی دوسری سب سے بڑی پارٹی اور حزب اختلاف میں سب سے بڑی پارٹی کے طور پر پیچھے چھوڑنے کے لیے تیار ہیں۔

یہ نتائج ایسے ملک میں ایک تاریخی تبدیلی لائیں گے جو طویل عرصے سے رواداری اور کھلے پن پر فخر کرتا ہے۔

بیرون ملک مقیم اور کچھ پوسٹل ووٹوں کی گنتی ابھی باقی ہے اور دو بلاکس کے درمیان مارجن کم ہے، نتائج اب بھی تبدیل ہو سکتے ہیں۔

سوشل ڈیموکریٹ وزیر اعظم میگڈالینا اینڈرسن نے انتخابی رات میں شکست تسلیم نہیں کی اور کہا کہ نتائج آنے کے بہت قریب ہیں۔

الیکشن اتھارٹی نے کہا کہ ابتدائی نتیجہ بدھ کو جلد سے جلد دستیاب ہوگا۔

کرسٹرسن نے کہا ہے کہ وہ چھوٹے کرسچن ڈیموکریٹس اور ممکنہ طور پر لبرل کے ساتھ مل کر حکومت بنانے کی کوشش کریں گے اور پارلیمنٹ میں صرف سویڈن ڈیموکریٹ حمایت پر انحصار کریں گے۔

Sweden General Election

نتیجہ

Comments are closed on this story.