Aaj News

تعلیمی اداروں میں جلسوں پرپشاور ہائیکورٹ کا اظہار تشویش

چیف جسٹس ہائیکورٹ نے ایسا نہ کرنے کی ہدایت کردی
شائع 04 اکتوبر 2022 02:42pm
<p>فائل فوٹو</p>

فائل فوٹو

**پشاور ہائیکورٹ نے تعلیمی اداروں میں جلسوں پر تشویش کا اظہار کیا ہے۔ **

پشاور ہائیکورٹ کے چیف جسٹس قیصررشید نے شہر کے تعلیمی اداروں اورمصروف سڑکوں پر جلسے و احتجاج کو انتظامیہ کی ناکا می قرار دیتے ہوئے ایسا کرنے سے منع کیا ہے۔

چیف جسٹس ہائیکورٹ نے ریمارکس دیے کہ اسمبلی چوک اور ہائیکورٹ کے سامنے کوئی احتجاج نہ کریں، تعلیمی اداروں میں بھی جلسے نہیں ہونے چاہئیں۔

انہوں نے کہا کہ تعلیمی ادارے تعلیم کے لیے ہوتے ہیں جہاں کسی قسم کی سیاسی سرگرمیاں نہیں ہونی چاہئیں۔

انہوں نے ایڈووکیٹ جنرل کو ہدایت کی کہ حکومت کو اس حوالے سے تشویش سے آگاہ کریں۔

جسٹس قیصر رشید نے مزید کہا کہ اسمبلی چوک میں احتجاج سے پورے شہرکا ٹریفک نظام متاثر ہوتا ہے، یہ انتظامیہ کی بھی ناکامی ہے۔ احتجاج کرنے والے جہاں سے آتے ہیں انہیں وہیں روک دیں۔

واضح رہے کہ گزشتہ دنوں چیئرمین پاکستان تحریک انصاف عمران خان نے لاہورکی جی سی یونیورسٹی میں جلسے کے بعد پشاور کے تاریخی ایڈورڈز کالج میں طلباء سے خطاب کیا تھا جس پرخاصی تنقید کی گئی تھی۔

مخالفت کرنے والوں کا کہناتھا کہ تعلیمی اداروں کو سیاست سے پاک رکھنا چاہیے۔

imran khan

Peshawar High Court

politics041022

Comments are closed on this story.

مقبول ترین