Aaj TV News

BR100 4,845 Decreased By ▼ -7 (-0.15%)
BR30 25,718 Increased By ▲ 47 (0.18%)
KSE100 45,083 Decreased By ▼ -104 (-0.23%)
KSE30 18,472 Decreased By ▼ -13 (-0.07%)
COVID-19 TOTAL DAILY
CASES 725,602 4584
DEATHS 15,501 58
Sindh 269,126 Cases
Punjab 250,459 Cases
Balochistan 20,321 Cases
Islamabad 66,380 Cases
KP 99,595 Cases

سینیٹ انتخابات اوپن بیلٹ سے متعلق صدارتی ریفرنس پر سماعت کے دوران سینیٹر رضا ربانی نے دلائل دیئے کہ سینیٹ کا الیکشن عارضی قانون کے تحت نہیں ہوسکتا،

سینیٹ انتخابات اوپن بیلٹ سے متعلق صدارتی ریفرنس پر سماعت ہوئی۔

سماعت میں چیف جسٹس نے ریمارکس دیئے کہ جمہوریت میں فیصلےپارٹی کرتی ہے قیادت نہیں، آئین میں پارٹیوں کا ذکر ہے، شخصیات کا نہیں۔

سینیٹر رضا ربانی نے دلائل دیئے کہ سینیٹ کا الیکشن عارضی قانون کے تحت نہیں ہوسکتا، آرڈیننس کی مدت ایک سوبیس دن ہوتی ہے، فاروق ایچ نائیک نے دلائل دیئے کہ۔ اگر پارلیمنٹ کوئی ایسا قانون بنائے جو آئین سے متصادم ہو تو یہ عدالت اسے کالعدم قراردے سکتی ہے۔

سندھ ہائیکورٹ بار ایسوسی ایشن کے وکیل صلاح الدین نے اپنے دلائل میں کہا کہ حکومت عدلیہ سے کھلواڑ کر رہی ہے، عدالت اس ریفرنس کو اٹھا کر باہر پھینک دے۔

اٹارنی جنرل عدالت سے رائے دینے کا نہیں بلکہ اوپن بیلٹ سے الیکشن کرانے کی استدعا کرتے رہے،عدالت نے کیس کی سماعت کل تک ملتوی کر دی۔