Aaj TV News

BR100 4,744 Increased By ▲ 67 (1.43%)
BR30 22,971 Increased By ▲ 921 (4.18%)
KSE100 45,275 Increased By ▲ 457 (1.02%)
KSE30 17,837 Increased By ▲ 195 (1.11%)
COVID-19 TOTAL DAILY
CASES 1,241,825 1,400
DEATHS 27,638 41
Sindh 456,343 Cases
Punjab 429,655 Cases
Balochistan 32,875 Cases
Islamabad 105,217 Cases
KP 173,353 Cases

اسلام آباد:وزیرخارجہ شاہ محمود قریشی کا کہنا ہے کہ افغانستان کا مسئلہ سیاسی ہےجومذاکرات سے ہی حل ہوگا،جنگ اورمفاہمت ایک ساتھ نہیں چل سکتے، پاکستان نے افغانستان میں امن کیلئے ہرممکن اقدام کئے، نیشنل سیکیورٹی افغانستان کے بیان سے مایوسی ہوئی۔

اسلام آباد میں پاک افغان دو طرفہ مذاکرات کے افتتاحی سیشن سے خطاب کرتےہوئے وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے کہا کہ افغانستان کامسئلہ سیاسی ہےجومذاکرات سےہی حل ہوگا،وزارت خارجہ دوست ممالک سےتعلقات کومزید وسعت دینےکیلئےکردار ادا کرتی ہے۔

شاہ محمود قریشی نے کہا کہ جنگ اور مفاہمت ایک ساتھ نہیں چل سکتے،افغانستان میں قیام امن کیلئے پاکستان کی کوششوں کوعالمی سطح پرسراہا گیا،پاکستان نےافغانستان میں قیام امن کیلئےکام کیا۔

وزیرخارجہ کا کہنا تھا کہ شوریٰ علماء کےاجلاس میں دہشتگردی کی مذمت کی گئی،پاکستان نے افغانستان میں امن کیلئے ہرممکن اقدامات کئے،نیشنل سیکیورٹی افغانستان کے بیان نےمایوس کیا،ایسےبیانات امن کی کاوشوں کو سبوتاژ کرسکتے ہیں۔

وزیرخارجہ شاہ محمود قریشی نے مزید کہا کہ دنیاپاکستان کو افغانستان میں قیام امن کےمعاون کےطور پر دیکھتی ہے،امن ہرکسی کی خواہش ہے،آج افغانستان20سال قبل والا نہیں،افغانستان میں امن خطےکے مستقبل کیلئےناگزیرہے۔

شاہ محمود قریشی کا کہنا تھا کہ وزیراعظم نےہمیشہ کہاہے امن صرف مذاکرات سےممکن ہے،جدید ترین جنگی ٹیکنالوجی سے بھی امن قائم نہیں کرسکتے۔