Aaj TV News

BR100 4,644 Decreased By ▼ -89 (-1.89%)
BR30 20,295 Decreased By ▼ -45 (-0.22%)
KSE100 45,322 Decreased By ▼ -222 (-0.49%)
KSE30 17,720 Decreased By ▼ -91 (-0.51%)
COVID-19 TOTAL DAILY
CASES 1,269,806 572
DEATHS 28,392 6
Sindh 468,164 Cases
Punjab 439,307 Cases
Balochistan 33,204 Cases
Islamabad 106,749 Cases
KP 177,553 Cases

ہم اکثر دانت برش کرنے کے بعد ماﺅتھ واش استعمال کرتے ہیں، مگر ہمیں معلوم ہی نہیں تھا کہ ہم فائدے کے چکر میں الٹا اپنا نقصان ہی کررہے ہیں۔

ایک ماہر ڈینٹسٹ نے اس حوالے سے تنبیہ جاری کی ہے۔ دی مرر کے مطابق ڈاکٹر اینا پیٹرسن نے اپنے ٹک ٹاک اکاﺅنٹ پر پوسٹ کی گئی ایک ویڈیو میں بتایا کہ دانت برش کرنے کے بعد ماﺅتھ واش استعمال کرنا فائدے کی بجائے الٹا سنگین نقصان کا سبب بنتا ہے۔

ڈاکٹر اینا کے مطابق ٹوتھ پیسٹ میں 1450پارٹس فی ملین فلورائیڈ ہوتے ہیں، اس کے برعکس ماﺅتھ واش میں صرف 220 پارٹس فی ملین فلورائیڈ ہوتے ہیں۔ چنانچہ جب آپ دانت برش کرنے کے بعد ماﺅتھ واش استعمال کر رہے ہوتے ہیں تو آپ بنیادی طور پر 1450پارٹس کو محض 220پارٹس کے لیے ضائع کر رہے ہوتے ہیں، کیونکہ ماﺅتھ واش انہیں دھو کر منہ سے نکال دیتا ہے اور آپ ان کے فوائد سے محروم رہ جاتے ہیں۔ لہٰذا دانت برش کرنے کے بعد ہمیں کبھی بھی ماﺅتھ واش استعمال نہیں کرنا چاہیے۔

ڈاکٹر اینا کا کہنا تھا کہ، 'ہمیں صبح شام اچھے ٹوتھ پیسٹ سے دانت برش کرنے چاہیے اور ہر کھانے کے بعد صفائی کے لیے ماﺅتھ واش استعمال کرنا چاہیے۔'

TikTok/annapetersondental
TikTok/annapetersondental