Aaj News

پیر, جولائ 22, 2024  
15 Muharram 1446  

بھارت کی سڑکوں پر پڑے گڑھے 80 سالہ شخص کو زندگی دے گئے

80 سالہ درشن سنگھ برار کو ڈاکٹروں نے مردہ قرار دے دیا تھا، ذرائع
شائع 13 جنوری 2024 01:33pm
تصویر: این ڈی ٹی وی
تصویر: این ڈی ٹی وی

سڑکوں پر موجود گڑھے جہاں ٹریفک کی روانی کو متاثر کرتے ہیں تو وہیں یہ جان لیوا حادثات کی وجہ بھی بنتے ہیں۔ لیکن بھارتی شہر ہریانہ کی سڑکوں پر پرے گڑھے ایک 80 سالہ مردہ شخص کیلئے زندگی کا سبب بن گئے۔

بھارتی میڈیا کے مطابق 80 سالہ درشن سنگھ برار کو ڈاکٹروں نے مردہ قرار دے دیا تھا۔ جس کے بعد ان کی لاش کو پٹیالہ سے کرنال کے قریب ان کے گھر لے جایا جا رہا تھا، جہاں نہ صرف ان کے سوگواران جمع تھے بلکہ ان کی آخری رسومات کے لیے کھانا بھی رکھا گیا تھا اور لکڑیاں بھی جمع کی گئی تھیں۔

ان کے پوتے بلوان سنگھ نے بھارتی میڈیا کو بتایا کہ ’پٹیالہ میں میرے بھائی نے جمعرات کو صبح 9 بجے کے قریب ہمارے دادا کی موت کے بارے میں ہمیں اطلاع دی، اور وہ انہیں ان کی آخری رسومات کے لیے ایک ایمبولینس میں نیسنگ (تقریباً 100 کلومیٹر دور) لے جا رہے تھے۔

پوتے کے مطابق ہم نے اپنے رشتہ داروں اور دیگر مقامی باشندوں کو اطلاع دی تھی جو انھیں جانتے تھے۔ اور وہ ان کے انتقال پر سوگ منانے کے لیے پہلے ہی جمع ہو چکے تھے۔

پوتے نے مزید بتایا کہ، ’جب ایمبولینس ہریانہ کے کیتھل کے ڈھنڈ گاؤں کے قریب تھی تو وہ ایک گڑھے سے ٹکرا گئی اور بلوان کے بھائی نے دیکھا کہ درشن سنگھ برار نے اپنا ہاتھ آگے بڑھایا تھا۔ حیران ہو کر اس نے دل کی دھڑکن کی جانچ کی اور احساس ہونے پر 80 سالہ بوڑھے کو قریبی اسپتال لے گیا‘۔

درشن سنگھ اب کرنال کے ایک اسپتال میں زیر علاج ہیں جہاں ان کی حالت تشویشناک ہے۔

بلوان سنگھ نے دادا کو معجزانہ طور پر بچنے سے متعلق کہا کہ ’یہ ایک معجزہ ہے۔ اب ہم امید کر رہے ہیں کہ میرے دادا جلد صحت یاب ہو جائیں گے۔ ہر وہ شخص نے، جو ان کی موت پر سوگ کے لیے جمع ہوا تھا، ہمیں مبارکباد دی، اور ہم نے ان سے درخواست کی کہ وہ کھانا کھائیں جو ہم نے تیار کیا تھا۔ یہ خدا کا فضل ہے کہ وہ اب سانس لے رہے ہیں اور امید ہے کہ وہ بہتر ہوجائیں گے‘۔

india

lifestyle

ambulances

Died

80 Year old man

Grand Father