Aaj News

جمعہ, جولائ 19, 2024  
13 Muharram 1446  

حج کے ارادے سے سعودی عرب جانے والوں کیلئے سعودی علما کا فتویٰ

سینئرعلما کونسل نے ایک فتویٰ جاری کیا ہے جس میں کچھ لوگوں پر پابندی کا تذکرموجود ہے
اپ ڈیٹ 29 اپريل 2024 07:23pm

سعودی عرب کی سینئیر علما کونسل نے آنے والے سیزن میں حج کرنے کا ارادہ رکھنے والوں کے لیے ایک فتویٰ جاری کیا ہے، جس میں کہا گیا ہے کہ سرکاری اجازت نامے کے بغیر حج کرنے پر پابندی ہوگی۔

وزارت برائے حج و عمرہ کی جانب سے جاری ایک بیان میں کہا گیا کہ سینئر علماء کونسل نے ایک فتویٰ جاری کیا ہے جس میں اس طرح کے طریقوں پر پابندی عائد کی گئی ہے۔

وزارت نے حج کرنے کا ارادہ رکھنے والوں پر زور دیا کہ وہ ضوابط اور رہنما خطوط طے کرنے پر سختی سے عمل کریں۔

حج کے دوران بھیک مانگنے والوں کو کتنی سزا ہوگی

اس فیصلے کا مقصد زائرین کی حفاظت کے ساتھ ساتھ عمرہ کرنے والوں اور زائرین کی تنظیم اور ہم آہنگی کو یقینی بنانا ہے۔

سعودی وزارت داخلہ، وزارت حج و عمرہ اور مسجد نبوی ﷺ اور اس کے امور کی نگہداشت کے لیے قائم جنرل اتھارٹی کے ساتھ سینئر اسکالرز کی کونسل نے بغیر سرکاری اجازت نامے کے حج کرنے والوں کو درپیش چیلنجوں اور خطرات کا جائزہ لیا۔

فتویٰ کونسل کی طرف سے اجازت نامے کو لازمی قرار دینے کا فیصلہ نہ صرف دستاویز کی ضرورت کو ظاہر کرتا ہے، بلکہ یہ بھی بتاتا ہے کہ اسلامی قانون میں اس کی جڑیں کتنی گہری ہیں اور حج سے منسلک عبادات کو آسان بنانے میں یہ ایک اہم جز ہے۔

بنگلہ دیش: حکومت نے حج اخراجات کم کردیئے، کیسے ممکن ہوا؟

یہ فتویٰ شریعت کی طرف سے لازمی خدمات کی ہموار فراہمی کو بھی یقینی بناتا ہے، جو کہ نظم و نسق اور حفاظت کو برقرار رکھنے کے لیے بہت ضروری ہے، خاص طور پر زیادہ ہجوم اور بھگدڑ کو روکنے کے لیے حجاج کی تعداد کے انتظام میں۔

اسلامی قانون کے مطابق حج پرمٹ حاصل کرنا محض قانونی ذمہ داری نہیں ہے بلکہ ملک کے قانون کی تعمیل ہے۔

کونسل کے مطابق، جو لوگ اس قانونی جوابدہی کا احترام کرتے ہیں وہ نہ صرف قانونی اثرات سے بچیں گے بلکہ انہیں ان کے ایمان اور اطاعت کا ثبوت بھی دیا جائے گا۔

پرمٹ کے بغیر حج کرنا نہ صرف فرد کی حفاظت کو خطرے میں ڈالتا ہے بلکہ ساتھی عازمین کے لیے بھی ایک اہم خطرہ ہے۔

Saudia Arabia

Hajj

Fatwa

HAJJ PACKAGE

SAUDI MINSTRY OF HAJJ

Hajj Season

Hajj Without Permission