Aaj News

ہفتہ, جولائ 13, 2024  
06 Muharram 1446  

سپریم کورٹ کے حکم پر کراچی میں تجاوزات کیخلاف آپریشن، عملے کو مزاحمت کا سامنا

تجاوزات کیخلاف کارروائی میں علاقہ پولیس کی بھاری نفری محکمہ اینٹی انکروچمنٹ کے ساتھ موجود رہی
شائع 29 اپريل 2024 10:31pm

سپریم کورٹ پاکستان کے حکم پر شہر قائد میں تجاوزات کے خاتمے کا آغاز ہوگیا، شہر بھر میں قائم تجاوزات کے خلاف محکمہ اینٹی انکروچمنٹ نے بھر پور کارروائی کی۔

گلشن اقبال ڈویژن میں واقع جوہر اسکوئر روڈ پر قائم تجاوزات کے خلاف بھاری مشینری کے ذریعے کاروائی کی گئی جبکہ دوران کارروائی سرکاری عملے کو مزاحمت کا سامنا کرنا پڑا۔

سپریم کورٹ کا رینجرز ہیڈ کوارٹر، گورنر ہاؤس اور سی ایم ہاؤس سمیت تمام سرکاری اور نجی عمارتوں کے باہر سے رکاوٹیں ہٹانے کا حکم

تجاوزات کے خلاف کارروائی میں علاقہ پولیس کی بھاری نفری محکمہ اینٹی انکروچمنٹ کے ساتھ موجود رہی۔

دوسری جانب چیف جسٹس آف پاکستان جسٹس قاضی فائز عیسیٰ نے 3 دن میں ملک بھر کی سڑکوں اور فٹ پاتھوں سے تجاوزات ختم کرنے کا حکم دے دیا۔

عدالت نے حکم نامے کی کاپی اٹارنی جنرل، تمام ایڈووکیٹ جنرلز اور سرکاری اداروں کو بھیجنے کا حکم دیا۔

سپریم کورٹ سے جاری فیصلے کے مطابق شہریوں کی آزادانہ نقل و حرکت روکنے کا اختیار کسی کے پاس نہیں، سرکار کے اخراجات کے لیے ٹیکس دینے والے عوام کے حقوق کوئی نہیں چھین سکتا۔

سپریم کورٹ میں کراچی تجاوزات کیس جمعرات کو سماعت کیلئے مقرر

لاہور میں اہم شاہراہوں مال روڈ، ہال روڈ، شاہ عالم، اور متعدد جگہوں پر تجاوزات کی بھر مار ہے، جس کے باعث شہریوں کو نقل وحرکت میں شدید مشکلات کا سامنا ہے۔

سپریم کورٹ نے 3 دن میں تجاوزات ہٹانے کا فیصلہ جاری کیا لیکن ضلعی انتظامیہ کی جانب سے ابھی تک اس حوالے سے کوئی پیشرفت نظر نہیں آتی۔

karachi

Justice Qazi Faez Isa

Supreme Court Karachi Registry

Chief Justice Qazi Faez Isa

karachi registry

Karachi encroachment case

encroachment case

karachi encroachment