Aaj TV News

BR100 4,607 Decreased By ▼ -61 (-1.3%)
BR30 20,274 Decreased By ▼ -618 (-2.96%)
KSE100 44,629 Decreased By ▼ -192 (-0.43%)
KSE30 17,456 Decreased By ▼ -66 (-0.38%)
COVID-19 TOTAL DAILY
CASES 1,265,650 603
DEATHS 28,300 20
Sindh 466,154 Cases
Punjab 438,133 Cases
Balochistan 33,133 Cases
Islamabad 106,504 Cases
KP 176,950 Cases

آئندہ 15 روز کے لیے پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافے کا امکان ہے،عالمی مارکیٹ میں قیمت 83ڈالر فی بیرل تک پہنچ گئی۔

پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں سے متعلق اوگرا کی جانب سے سمری آج وزارت خزانہ کو بھجوائی جائے گی۔

عالمی سطح پرخام تیل کی قیمتیں 83 ڈالر فی بیرل تک پہنچ گئیں جس کے باعث ذرائع کا کہنا ہے مقامی سطح پر بھی پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں 8 روپے تک اضافے کی تجویز دیئے جانے کا امکان ہے۔

پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں سے متعلق حتمی فیصلہ وزیراعظم کی مشاورت سے وزارت خزانہ کرے گی،پیٹرولیم مصنوعات کی نئی قیمتوں سے متعلق اعلان کل ہوگا۔

تحریک انصاف کی حکومت نے ایک اور یوٹرن لیتے ہوئے آئی ایم ایف کے دباؤ میں آکر مزید کڑی شرائط قبول کرلی ہیں۔

بجلی کی قیمت میں اضافے کا فیصلہ

دوسری جانب حکومت نے مبینہ طور پر بجلی کے نرخ میں 1.39 روپے فی یونٹ اضافہ کرنے پر اتفاق کیا ہے۔

بزنس ریکارڈر نے ذرائع کے حوالے سے دعویٰ کیا کہ مبینہ طور پر یہ سمجھوتہ پاکستانی حکام، بین الاقوامی مالیاتی فنڈ (آئی ایم ایف)، ورلڈ بینک اور ایشیائی ترقیاتی بینک (اے ڈی بی) کے درمیان طے پایا ہے۔

ذرائع نے بتایا کہ وزیر خزانہ شوکت ترین، جو آئی ایم ایف کے ساتھ مذاکرات کے لیے واشنگٹن پہنچ رہے ہیں، یہ پیغام لے کر جائیں گے کہ حکومت ٹیرف بڑھا دے گی۔

اس سے قبل، وزیر اعظم عمران خان اور شوکت ترین نے سرعام بیس ٹیرف میں اضافے کی مخالفت کی تھی کیونکہ ان کے مطابق نہ تو انڈسٹری اور نہ ہی دیگر زمرے کے صارفین اس کا نقصان برداشت کر سکیں گے۔