Aaj TV News

BR100 4,519 Increased By ▲ 22 (0.49%)
BR30 18,277 Decreased By ▼ -62 (-0.34%)
KSE100 44,114 Increased By ▲ 178 (0.41%)
KSE30 17,034 Increased By ▲ 95 (0.56%)
COVID-19 TOTAL DAILY
CASES 1,283,886 411
DEATHS 28,704 7
Sindh 475,097 Cases
Punjab 442,876 Cases
Balochistan 33,471 Cases
Islamabad 107,601 Cases
KP 179,888 Cases

چیف جسٹس آف پاکستان جسٹس گلزار احمد نے کہا ہے کہ سپریم کورٹ اور ماتحت عدالتیں قانون اور آئین کے تحت فیصلے کر رہی ہیں، کوئی عدالتوں سے مرضی کے فیصلے نہیں کروا سکتا، جمہوریت کے علاوہ کوئی سیٹ اپ قبول نہیں کریں گے۔

لاہور میں ہونے والی عاصمہ جہانگیر کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے چیف جسٹس آف پاکستان جسٹس گلزار احمد نے کہا اداروں کے متعلق بات کر کے عوام کا اداروں سے اعتماد نہ اٹھائیں۔

سابق صدر سپریم کورٹ بار ایسوسی ایشن کو مخاطب کرتے ہوئے انہوں نے سوال کیا کہ بتائیں کونسا فیصلہ عدالت نے دباو میں کیا؟ ملک میں کسی فرد کی نہیں آئین اور قانون کی حکمرانی ہے۔

چیف جسٹس لاہور ہائیکورٹ امیر بھٹی کا کہنا تھا کہ عدلیہ ان اصولوں کی پاسداری کرتی ہے جن کی بنیاد پر پاکستان بنا۔

چیف جسٹس اسلام آباد ہائیکورٹ اطہر من اللہ کا کہنا تھا کہ ہم اپنا سر ریت میں نہیں چھپا سکتے، ہمیں اپنی غلطیوں کو تسلیم کرنا چاہیے۔

کانفرس سے خطاب کرتے ہوئے علی احمد کرد کا کہنا تھا کہ لوگ عدلیہ سے سینے پر زخم لے کر جاتے ہیں، کیا یہ عدلیہ انسانی حقوق کی حفاظت اور جمہوری اداروں کی حفاظت کرے گی۔

کانفرنس سے سپریم کورٹ کے جسٹس فائز عیسی سمیت دیگر مندوبین نے بھی خطاب کیا۔