Aaj TV News

BR100 4,599 Increased By ▲ 13 (0.29%)
BR30 17,334 Decreased By ▼ -78 (-0.45%)
KSE100 44,888 Decreased By ▼ -36 (-0.08%)
KSE30 17,696 Decreased By ▼ -30 (-0.17%)
COVID-19 TOTAL DAILY
CASES 1,381,152 6,357
DEATHS 29,122 17
Sindh 529,218 Cases
Punjab 466,164 Cases
Balochistan 33,975 Cases
Islamabad 120,128 Cases
KP 185,683 Cases

سابق چیئرمین رویت ہلال کمیٹی مفتی منیب الرحمان نے سیالکوٹ واقعہ کو انتہائی ناخوشگوار سانحہ قرار دیدیا۔

وہ کہتے ہیں کہ قانون کو ہاتھ میں لینے کا کوئی جواز نہیں ہے۔ اس سے معاشرے میں انارکی اور لاقانونیت پھیلتی ہے جو کسی بھی صورت میں ملک وملّت کے مفاد میں نہیں ہے۔

ایک بیان میں مفتی منیب الرحمان کا کہنا تھا کہ ہمارے ملک میں ایک آئینی اور قانونی نظام موجود ہے، اگرچہ اس کی شفافیت اور غیر جانبداری پر سوالات اٹھتے رہتے ہیں،تاہم اس کے ہوتے ہوئے قانون کو ہاتھ میں لینے کا کوئی جواز نہیں ہے، اس سے معاشرے میں انارکی اور لاقانونیت پھیلتی ہے۔

انھوں نے مزید کہا کہ ایسے واقعات سے عالمی سطح پر بھی پاکستان کا تشخص منفی پیدا ہوتا ہے، پاکستان پر کئی برسوں سے ویسے بھی ایف اے ٹی ایف کی تلوار لٹک رہی ہے۔

دوسری جانب سیالکوٹ واقعےپرپنجاب پولیس نے کارروائی کرتے ہوئے 13مرکزی ملزمان سمیت 118افرادکوحراست میں لےلیا۔

ترجمان پنجاب حکومت حسان خاور کہتےہیں کہ ہمارا فوکس ہے کہ اس کیس کو ٹیسٹ کیس بنائیں۔

سیالکوٹ واقعے کےحوالےسے آئی جی پنجاب راو سردار اور ترجمان پنجاب حکومت نے مشترکہ پریس کانفرنس کی۔

میڈٰیا سے گفتگو کرتے ہوئےآئی جی پنجاب کاکہناتھاکہ جھگڑے کا آغاز 10بج کر 2منٹ پر ہوا،گیارہ بجکر پانچ منٹ پر پریانتھہ کی ہلاکت ہو چکی تھی۔اگر پتہ چلا کہ کسی بھی قسم کی لاپرواہی پائی گئی تو کارروائی کی جائے گی۔