Aaj News

جمعہ, اپريل 19, 2024  
10 Shawwal 1445  

خاتون جج کو دھمکی دینے کا کیس: عمران خان کی حاضری معافی کی درخواست منظور

آئندہ سماعت پر سابق وزیراعظم کو حاضری یقینی بنانے کی ہدایت
اپ ڈیٹ 09 مارچ 2023 04:25pm
چیئرمین پی ٹی آئی عمران خان
چیئرمین پی ٹی آئی عمران خان

اسلام آباد کی مقامی عدالت نے خاتون جج کو دھمکی دینے کے کیس میں چیئرمین پی ٹی آئی عمران خان کی حاضری معافی کی درخواست منظور کرتے ہوئے آئندہ سماعت پر سابق وزیراعظم کو حاضری یقینی بنانے کی ہدایت کردی۔

ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن کورٹ میں خاتون جج زیبا چوہدری کو دھمکی دینے کے کیس کی سماعت ہوئی۔

عمران خان سیشن کورٹ میں پیش نہ ہوئے اور ان کے وکیل نعیم پنجوتھہ نے عمران خان کی آج حاضری سے استثنیٰ کی درخواست دائر کی۔

وکیل کا کہنا تھا کہ ایسا نہیں کہ عمران خان عدالت میں پیش نہیں ہونا چاہتے، عمران خان ہر عدالت میں پیش ہوئے، مختلف عدالتوں میں عمران خان نے بذریعہ ویڈیولنک حاضر ہونےکی درخواستیں دیں، موجودہ حکومت عمران خان کو قتل کرنا چاہتی ہے۔

سرکاری وکیل کا کہنا تھا کہ دفعہ 144 لاہور میں نافذ ہے، عمران خان کی عدالت پیشی پر نہیں۔

وکیل نعیم پنجوتھہ نےکہا کہ پر امن ریلی پر پنجاب حکومت نے شیلنگ اور ربڑ کی گولیاں برسائیں، عمران خان کی جہاں رہائش تھی اس پر نقل حرکت کرنا مشکل ہے۔

پراسیکیوٹر راجہ رضوان عباسی کے آنے تک سول جج رانا مجاہد رحیم نے سماعت میں وقفہ کردیا۔

وقفے کے بعد دوبارہ کیس کی سماعت شروع ہوئی تو عمران خان کے وکیل کی جانب سے دلائل دیتے ہوئے کہا کہ عمران خان کی صحت اسلام آباد سفراجازت نہیں دیتی ، ان کی جان کو خطرہ سنجیدہ نوعیت کا ہے، سیکیورٹی خدشات کے پیش نظر آج حاضری سے استثنیٰ دیا جائے۔

عدالت نےعمران خان کی حاضری معافی کی درخواست منظور کرتے ہوئے سماعت 13مارچ تک ملتوی کردی۔

دوسری جانب اسلام آباد کی انسداد دہشتگردی عدالت نے بھی تھانہ سنجانی میں درج مقدمہ میں عمران خان کی عبوری ضمانت میں 21 مارچ تک توسیع کرتے ہوئے آج کی حاضری سے استثنا بھی منظور کرلیا۔

کیس کی سماعت انسداد دہشتگری عدالت کے جج راجا جواد عباس حسن نے کی۔

pti

imran khan

Islamabad High Court

Politics March 09 2023

judge rana mujahid raheem

Comments are closed on this story.

تبصرے

تبولا

Taboola ads will show in this div