Aaj TV News

BR100 4,687 Decreased By ▼ -28 (-0.59%)
BR30 18,641 Decreased By ▼ -617 (-3.2%)
KSE100 45,612 Decreased By ▼ -151 (-0.33%)
KSE30 17,942 Decreased By ▼ -56 (-0.31%)
COVID-19 TOTAL DAILY
CASES 1,333,521 5,034
DEATHS 29,029 10
Sindh 505,930 Cases
Punjab 454,372 Cases
Balochistan 33,729 Cases
Islamabad 111,855 Cases
KP 182,419 Cases

اسلام آباد:وزیراعظم عمران خان نے ٹیکس اکٹھا کرنے والوں اور ٹیکس پریکٹشنرز کے صوابدیدی اختیارات کو ختم کرنے کا حکم دیتےہوئے کہا کہ اصلاحات کا مقصد ٹیکس نظام میں شفافیت کو یقینی بنانا ہے،یقینی بنایا جائے کہ عام عوام پر کسی قسم کا اضافی بوجھ نہ پڑے۔

وزیر اعظم عمران خان کی زیرصدارت ٹیکس اصلاحات کے حوالے سے اجلاس ہوا، جس میں وفاق وزرا خسرو بختیار، عبد الحفیظ شیخ، اسد عمر، حماد اظہر، مشیران عبدالرزاق داؤد، ڈاکٹر عشرت حسین، معاونین خصوصی اور دیگر سینئر افسران نے شرکت کی۔

اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے وزیراعظم کا کہنا تھا کہ ٹیکس اصلاحات کا مقصد ٹیکس نظام کو آسان بنانا ہے، اصلاحات سے ٹیکس نظام میں خامیاں ختم ہوں گی، آٹومیشن متعارف کرانا اور ٹیکس نظام میں شفافیت کو یقینی بنانا ہے۔

وزیراعظم نے ٹیکس چوری کے عوامل پر خصوصی توجہ دینے کی ہدایت کرتے ہوئے کہاکہ فلائنگ انوائسز کی شکایت کے تدارک پر خصوصی توجہ دی جائے، ٹیکس اصلاحات ایسی ہونی چاہیئے جو معیشت اور کاروباری برادری کیلئے آسانیاں پیدا کرے۔

عمران خان نے ٹیکس اکٹھا کرنے والوں اور ٹیکس پریکٹشنرز کے صوابدیدی اختیارات کو ختم کرنے کا حکم دیتےہوئے کہا کہ اصلاحات کا مقصد ٹیکس نظام میں شفافیت کو یقینی بنانا ہے،یقینی بنایا جائے کہ عام عوام پر کسی قسم کا اضافی بوجھ نہ پڑے۔