Aaj TV News

BR100 4,597 Increased By ▲ 11 (0.24%)
BR30 17,781 Increased By ▲ 212 (1.21%)
KSE100 45,018 Increased By ▲ 192 (0.43%)
KSE30 17,748 Increased By ▲ 82 (0.46%)
COVID-19 TOTAL DAILY
CASES 1,360,019 6,540
DEATHS 29,077 12
Sindh 520,415 Cases
Punjab 460,335 Cases
Balochistan 33,855 Cases
Islamabad 115,939 Cases
KP 183,865 Cases

صادق سنجرانی 3 اپریل 2018 کو ہونے والے سینیٹ کے الیکشن میں بطورآزاد امیدوار پہلی مرتبہ ایوان بالا کے رکن بنے اور ساتھ ہی چیئرمین سینیٹ بن گئے ۔ حکومت کی جانب سے چئیرمین سینیٹ کے لیےنامزد امیدوار صادق سنجرانی کل یوسف رضاگیلانی کے مدمقابل ہوں گے۔

سابق چیرمین سینیٹ صادق سنجرانی 14 اپریل 1978 کوبلوچستان کے علاقے چاغی میں پیدا ہوئے ۔ ان کے والد محمد آصف سنجرانی کا شمار چاغی ضلع کے صف اول کے قبائلی سرداروں میں ہوتا ہے ۔

صادق سنجرانی نے ابتدائی تعلیم اپنے آبائی علاقے نوکنڈی سے حاصل کی بعد میں انہوں نے تعلیم اسلام آباد اور بیروں ملک سے بھی حاصل کی۔ صادق سنجرانی نے ماسٹر ڈگری بیروں ملک سے حاصل کی۔

صادق سنجرانی نے سیاسی کیریئر کاآغاز 1998 میں مسلم لیگ کی حکومت میں کیا۔ صادق سنجرانی 1998 میں مسلم لیگ ن کی حکومت میں میاں نوازشریف کے کواڈنیٹررہے ۔

صادق سنجرانی 2008 میں پیپلزپارٹی کی حکومت میں بھی اہم عہدوں پر کام کیا۔ صادق سنجرانی کو وزیراعظم یوسف رضا گیلانی نے انہیں وزیراعظم شکایت سیل کا انچارچ بنایا ۔

صادق سنجرانی 3 اپریل 2018 کو ہونے والے سینیٹ کے الیکشن میں بطور آزاد امیدوارپہلی مرتبہ ایوان بالا کے رکن بنے ۔ 12 مارچ 2018 کو انہیں بلوچستان سے پہلا چئیرمین سینیٹ منتخب ہونے کا اعزاز حاصل ہوا۔ اس وقت ان کی حمایت پیپلزپارٹی اور ن لیگ نے مشترکہ طورپرکی۔ بعد میں صادق سنجرانی کے خلاف یکم اگست 2019 کو تحریک عدم اعتماد آئی جو ناکام ہوئی۔

صادق سنجرانی اس وقت بلوچستان عوامی پارٹی اور تحریک انصاف کے مشترکہ امیدوار ہیں ۔