Aaj TV News

BR100 4,401 Decreased By ▼ -270 (-5.78%)
BR30 17,494 Decreased By ▼ -1340 (-7.12%)
KSE100 43,234 Decreased By ▼ -2135 (-4.71%)
KSE30 16,698 Decreased By ▼ -878 (-4.99%)
COVID-19 TOTAL DAILY
CASES 1,285,631 377
DEATHS 28,745 8
Sindh 476,017 Cases
Punjab 443,240 Cases
Balochistan 33,488 Cases
Islamabad 107,765 Cases
KP 180,146 Cases

اونٹ عربوں کے نزدیک انتہائی بیش قیمت جانور ہیں، مگر ان اونٹوں میں عرنون نامی اونٹ کو دنیا کا سب سے مہنگا اور مشہور ترین اونٹ کہا جاتا ہے، اس کی قیمت اب دو سو ملین ریال یعنی دو کروڑ ریال جو پاکستانی روپے میں تقریباَ ساڑھے آٹھ ارب روپے سے بھی زیادہ بنتی ہے ۔

اربوں روپے کے اونٹ کی اہمیت اتنی کیوں ہے؟ الرجل عرب نیوز کے مطابق عرنون کو گینز بک آف ورلڈ ریکارڈ میں دنیا کا مہنگا ترین اونٹ کے طور پر درج کیا جاچکا ہے، گیننز بک آف ورلڈ ریکارڈ کی انتظامیہ کی جانب سے اس کی ایک ویڈیو بھی جاری کی گئی ہے۔

کنگ عبدالعزیز فیسٹول کے تیسرے ایڈیشن میں اس کی پہلی پوزیشن آئی ہے۔ عرنون سعودی عرب میں اونٹ کے باڑوں میں سے ایک میں موجود ہے۔ عرنون کے مالک کا کہنا ہے کہ یہ اونٹ اس نے اپنے ایک دوست سے خریدا تھا۔

ان کے مطابق متعدد مرتبہ اسے 25 ملین ریال تک خریدنے کی پیشکش بھی ہوئی تھی جو انہوں نے ٹھکرا دی تھی۔ اونٹ کے مالک کا مزید کہنا تھا کہ یہ الھدب نامی اونٹوں کی نسل سے ہے ، جسے سعودی عرب میں امیر سلطان کا اونٹ کہا جاتا ہے۔ اس کا شمار مغاترین کے بہترین اونٹوں میں ہوتا ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ اس وقت اس نسل کی 60ویں پشت چل رہی ہے۔ عرنون اونٹ کے مالک کا کہنا ہے کہ اس کی پیدائش 1418 میں ہوئی تھی۔

مالک کا کہنا تھا کہ اس کے پاس اسی نسل کے آٹھ اونٹ موجود ہیں جو بین الااقوامی ریس میں حصہ لینے کے لیے تیار ہیں۔