Aaj TV News

BR100 4,597 Increased By ▲ 11 (0.24%)
BR30 17,781 Increased By ▲ 212 (1.21%)
KSE100 45,018 Increased By ▲ 192 (0.43%)
KSE30 17,748 Increased By ▲ 82 (0.46%)
COVID-19 TOTAL DAILY
CASES 1,360,019 6,540
DEATHS 29,077 12
Sindh 520,415 Cases
Punjab 460,335 Cases
Balochistan 33,855 Cases
Islamabad 115,939 Cases
KP 183,865 Cases

کراچی :وزیر تعلیم سندھ سعید غنی کی زیر صدارت اجلاس میں امتحانات کے حوالے سے اہم فیصلے کرلئے گئے،جولائی میں دسویں جماعت کے امتحانات کے فوری بعد نویں کے امتحانات لئے جائیں گے جبکہ فرسٹ ایئر کے امتحانات بارہویں جماعت کے فوری بعد اگست میں لئے جائیں گے۔

وزیر تعلیم و محنت سندھ سعید غنی کی زیر صدارت محکمہ تعلیم کی اسٹئیرنگ کمیٹی کا اجلاس ہوا،جس میں کلاس نہم اور گیارہویں کے امتحانات کی تاریخ پر تبادلہ خیال کیا گیا۔

اجلاس میں سیکرٹری تعلیم احمد بخش ناریجو،  سیکرٹری کالجز سید خالد حیدر شاہ،  سیکرٹری یونیورسٹیز، ارکان سندھ اسمبلی تنزیلہ ام حبیبہ،  رابعہ اظفر نظامی، پرائیویٹ اسکولز ایسوسی ایشنز کے  عہدیداروں نے بھی اجلاس میں شرکت کی۔

اجلاس میں اتفاق کیا گیا کہ جولائی میں دسویں جماعت کے امتحانات کے فوری بعد نویں کے امتحانات لئے جائیں گے جبکہ فرسٹ ایئر کے امتحانات بارہویں جماعت کے فوری بعد اگست میں لئے جائیں گے،تمام امتحانات میں صرف اختیاری مضامین کے پیپرز ہوں گے جبکہ پہلی سے آٹھویں تک کے امتحانات اسکولز میں ہوں گے، تاریخ کا اعلان اسکولز اپنے طور پر کرسکیں گے۔

اجلاس میں اس بات پر بھی اتفاق کیا گیا کہ امتحانات کے 45 روز کے بعد پہلے مرحلے میں کلاس دسویں اور بارہویں کے نتائج کا اعلان کیا جائے گا، نویں اور گیارہویں کے نتائج ان دونوں کلاسز کے نتائج کے بعد اعلان کئے جائیں گے۔

میٹرک اور انٹر میں اختیاری مضامین میں اگر کوئی طالبعلم فیل ہوتا ہے تو اس کو پاسنگ مارکس دئیے جائیں گے، لازمی مضامین کے مارکس اختیاری مضامین کے مارکس کی بنیاد پر دئیے جائیں گے جبکہ میٹرک اور انٹر میں پریکٹیکل کے امتحانات تھیوری امتحانات کے بعد لئے جائیں گے، پریکٹیکل امتحانات اپنے اپنے اسکولز اور کالجز میں ہی ہوں گے۔