Aaj.tv Logo

روس کے صدر ولادیمیر پوٹن نے کہا ہے کہ مغربی ممالک ماسکو کے سیکورٹی خدشات کو نظر انداز کر رہا ہے اور یوکرین کو روس پر قابو پانے کے لیے ایک آلے کے طور پر استعمال کر رہا ہے۔

اپنے بیان میں انہوں نے کہا کہ انہیں امید ہے کہ بڑھتی ہوئی کشیدگی کو ختم کرنے کے لیے کوئی حل تلاش کیا جائے گا۔

صدر پوٹن نے کہا کہ کریملن ماسکو کے سیکورٹی مطالبات پر واشنگٹن اور نیٹو کی طرف سے جواب کا مطالعہ کر رہا ہے، لیکن یہ کافی نہیں ہے۔

پوٹن نے ماسکو میں ہنگری کے وزیر اعظم وکٹر اوربان کے ساتھ بات چیت کے بعد صحافیوں کو بتایا کہ یہ پہلے ہی واضح ہے کہ بنیادی طور پر روسی خدشات کو نظر انداز کر دیا گیا ہے۔

انہوں نے کہا کہ مجھے لگتا ہے کہ امریکہ یوکرین کی سلامتی کے بارے میں اتنا زیادہ فکر مند نہیں جتناروس کی ترقی کو روکنے کی فکر ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ مجھے امید ہے کہ آخر میں ہم کوئی حل تلاش کر لیں گے اگرچہ یہ آسان نہیں ہو گا۔

دوسری جانب مغربی رہنماؤں نے ماسکو پر الزام لگایا ہے کہ وہ یوکرین پر حملے کی تیاری کر رہا ہے اور اگر اس نے حملہ کیا تو اس کے سنگین نتائج ہونگے۔