Aaj News

خبردار! کوئی امیتابھ بچن کا نام ، تصویریا آواز استعمال نہ کرے

دہلی ہائیکورٹ نے اداکار کی درخواست پر پابندی عائد کردی
شائع 25 نومبر 2022 03:57pm

دہلی ہائیکورٹ نے فیصلہ دیا ہے کہ بالی ووڈ سُپراسٹارامیتابھ بچن کا نام، تصویر یا آواز ان کی اجازت کے بغیر استعمال نہیں کی جا سکتی۔

یہ فیصلہ آج امیتابھ بچن کی جانب سے دائر درخواست پر سماعت کرتے ہوئے سُنایا گیا۔

عدالت نے الیکٹرانکس اورانفارمیشن ٹیکنالوجی کی وزارت اور ٹیلی کام سروس فراہم کرنے والوں کو بھی متعلقہ مواد ہٹانے کی ہدایت کی۔

جسٹس نوین چاولہ نے اپنے ریمارکس میں کہا کہ اس بات سے اختلاف نہیں کیا جا سکتا کہ مدعی ایک معروف شخصیت ہیں جن کی نمائندگی مختلف اشتہارات میں بھی کی جاتی ہے، وہ ان لوگوں سے ناراض ہیں جو اپنی اشیاء اورخدمات کی تشہیر کے لیے ان کے ’سیلیبرٹی اسٹیٹس‘ کا بغیر اجازت استعمال کرتے ہیں۔

”بگ بی“ کے نام سے مشہور 80 سالہ امیتابھ بچن نے اپنے ”نام، شبیہہ، آواز اور شخصیت کے اوصاف“ کے تحفظ کے لیے عدالت سے رجوع کیا تھا۔

امیتابھ بچن کی وکالت کرنے والے سینیئرایڈووکیٹ ہریش سالوے نےعدالت میں بیان دیا کہ میں صرف ٹھورا سا ذکرکررہا ہوں کہ کیا ہورہا ہے، کوئی ٹی شرٹس بنا رہا ہے اور ان پر امیتابھ بچن کا چہرہ چھاپ رہا ہے، کوئی اُن کے پوسٹرفروخت رہا ہے۔ کسی نے جا کر amitabhbachchan.com کا ڈومین نام رجسٹرڈ کروا لیا ہے، یہی وجہ ہے کہ ہم نے عدالت سے رجوع کیا ہے۔

میگا اسٹار نے عدالت سے کتابوں کے پبلشرز، ٹی شرٹ فروشوں اور دیگر مختلف کاروبارکرنے والوں کے خلاف بھی پابندی کی استدعا کی۔

Bollywood

Amitabh Bachchan

Delhi High Court

تبصرے
1000 حروف
مقبول ترین