Aaj TV News

BR100 4,276 Increased By ▲ 45 (1.06%)
BR30 21,621 Increased By ▲ 232 (1.08%)
KSE100 41,097 Increased By ▲ 290 (0.71%)
KSE30 17,310 Increased By ▲ 150 (0.87%)

بالی ووڈ اداکارہ پریانکا چوپڑا کی شہرت 20 سال پہلے "مس ورلڈ" کا ٹائٹل جیتنے سے شروع ہوئی تھی۔ لیکن جب انہیں مس ورلڈ کا خطاب دینے کے لیے سٹیج پر بلوایا گیا تو انہوں نے اپنی سب سے بڑی پریشانی کو چھپانے کیلئے "نمستے" سے چھپایا۔

پریانکا چوپڑا کا کہنا ہے کہ وہ جب مس ورلڈ بنیں تو ان کے سوٹ کو ایک ٹیپ کے ذریعے جسم کے ساتھ چپکایا گیا تھا۔ انہوں نے کہا کہ اس دن جب انہیں مس ورلڈ کا اعزاز ملنے کے بعد ڈائس پر خطاب کرنا پڑا اس وقت تک مجھے یہ ہی پریشانی رہی کہ کہیں یہ سوٹ کھل نہ جائے۔

پریانکا نے بتایا کہ اس وقت لوگ سمجھ رہے تھے مجھے جیتنے کے بعد پریشانی ہورہی ہے، لیکن میں اصل میں صرف اور صرف اس وجہ سے پریشان تھی کہ میرے لباس کو کوئی مسئلہ پیش نہ آجائے۔

پریانکا کا کہنا تھا کہ میں نے اپنے لباس کو ٹھیک رکھنے کیلئے "نمستے" کے انداز میں اپنے ہاتھ جوڑے رکھے۔

'لوگ سمجھ رہے تھے کہ میں ان کے احترام میں ایسا کررہی ہوں ، حالنکہ مجھے اپنی پریشانی تھی جس کی وجہ سے میں نے اپنے لباس کو پکڑنے کے لیے نمستے کے انداز میں ہاتھ جوڑے ہوئے تھے۔'

ایک اور واقعہ بیان کرتے ہوئے ان کا کہناتھا کہ دو ہزار اٹھارہ میں ایک لباس پہنا تھا وہ اتنا تنگ تھا کہ میری پسلیاں ہی دب کر رہی گئیں تھیں۔

واضح رہے کہ پریانکا چوپڑا بھارت سے منتخب ہونے والی پانچویں مس ورلڈ تھیں۔