Aaj TV News

BR100 4,687 Decreased By ▼ -28 (-0.59%)
BR30 18,641 Decreased By ▼ -617 (-3.2%)
KSE100 45,617 Decreased By ▼ -146 (-0.32%)
KSE30 17,940 Decreased By ▼ -58 (-0.32%)
COVID-19 TOTAL DAILY
CASES 1,328,487 4,340
DEATHS 29,019 7
Sindh 502,500 Cases
Punjab 453,392 Cases
Balochistan 33,705 Cases
Islamabad 111,376 Cases
KP 182,311 Cases

وفاقی وزیر برائے منصوبہ بندی اسد عمر نے الزام عائد کیا ہے کہ کراچی میں ہیلتھ ورکرز کے علاوہ جان پہچان والوں کوبھی کورونا ویکسین لگائی جارہی ہے۔ انہوں ںے کہا کہ کراچی میں وی وی آئی پیز کو کورونا ویکسین لگانا غلط ہے۔

پاکستان تحریک انصاف سے تعلق رکھنے والے وفاقی وزیر نے کہا کہ وزیراعظم کے معاون خصوصی برائے صحت ڈاکٹر فیصل سلطان کی سربراہی میں حکومت سندھ کے نمائندوں سے اس ضمن میں باقاعدہ میٹنگ کی گئی ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ خاموش تماشائی بن کر نہیں بیٹھ سکتے ہیں۔

وفاقی وزیر اسد عمر نے کہا کہ ہونے والی میٹنگ میں حکومت سندھ کے نمائندوں سے سختی سے کہا گیا ہے کہ صرف ہیلتھ ورکرز کو کورونا ویکسین لگائی جائے۔ انہوں نے کہا کہ کورونا ویکسین قوم کی امانت ہے جو ابھی صرف ہیلتھ ورکرز کو لگنی چاہیے۔

انہوں نے کہا کہ ابھی تک وزیراعظم اور وزرا سمیت ان کے خاندانوں نے ویکسین نہیں لگوائی ہے۔ انہوں ںے کہا کہ ویکسین صوبائی حکومت کے کنٹرول میں دی گئی لیکن خاموش ہو کر نہیں بیٹھ سکتے ہیں۔

پی ٹی آئی کے وفاقی وزیر نے کہا کہ شکایات موصول ہوئی تھیں کہ کراچی میں کورونا ویکسین ہیلتھ ورکرز کے علاوہ جان پہنچان والوں کو بھی لگائی جا رہی ہے۔

اسد عمر کے مطابق ان شکایات کا فوری طورپر نوٹس لیا گیا اور این سی او سی کی ٹیم نے ڈاکٹر فیصل سلطان کی سربراہی میں حکومت سندھ کے نمائندوں سے میٹنگ کی اور تاکید کی کہ کورونا ویکسین صرف ہیلتھ ورکرز کو لگائی جائے۔