Aaj TV News

BR100 4,597 Increased By ▲ 11 (0.24%)
BR30 17,781 Increased By ▲ 212 (1.21%)
KSE100 45,018 Increased By ▲ 192 (0.43%)
KSE30 17,748 Increased By ▲ 82 (0.46%)
COVID-19 TOTAL DAILY
CASES 1,367,605 7,586
DEATHS 29,097 20
Sindh 523,774 Cases
Punjab 462,323 Cases
Balochistan 33,910 Cases
Islamabad 117,436 Cases
KP 184,455 Cases

وفاقی کابینہ میں حماد اظہرکے بعد شوکت ترین کو نیا مشیر خزانہ لیے جانے کا امکان ہے، وزارت اطلاعات اور آبی وسائل کی وزارتوں کے قلمدانون کا فیصلہ بھی تاحال نہ ہوسکا ، ائندہ چند روز میں وفاقی کابینہ میں ردو بدل کا امکان ہے۔

موجود حکومت کے ڈھائی سال کے عرصے میں ابتک وزارت خزانہ کے دو وزیر تبدیل کے جاچکے ہیں، اسد عمر سے وزارت واپس لی گئی تو حکومت نے عبدالحفیظ شئخ کو مشیر خزانہ کتے عہدے پر تعینات کیا۔

تاہم چند روز قبل وزیراعظم نے حفیظ شیخ سے عہدہ واپس لے لیا اور وزیر صنعت و پیداوار حماد اظہرکو انکی جگہ اضافی طور پر وزیر خزانہ کا چارج دیدیا گیا ہے۔ حماد اظہر نے ذمہ داریاں سنبھال لیں ۔

سابق وزیرخزانہ شوکت ترین کو وزارت خزانہ میں اہم عہدہ دئیےجانے کا امکان ہے،شوکت ترین حماد اظہر کے ساتھ مشیر خزانہ کے طور پر کام کر سکتے ہیں۔

شوکت ترین نے فوری طور پر مشیر خزانہ کا عہدہ لینے سے معذرت کرتے ہوئے کہا کہ جب تک نیب کیسز کی اپیلوں پرفیصلہ نہیں ہوتا عہدہ نہیں لونگا۔

وزارت اطلاعات، آبی وسائل سمیت متعدد وزارتوں مین تبدیلیوں کا امکان ہے جس کے لیے وزیراعظم سے مشاورت جاری ہے۔ ایم کیو ایم ، بلوچستان عوامی پارٹی ، کو بھی کابینہ میں شامل کرنے کے ھوالے سے بھئی بات چیت جاری ہے۔ امکان ہے کہ مشاورت مکمل ہونے کے فوری بعد کابینہ میں ردو بدل کر دیا جائے گا۔