Aaj TV News

BR100 4,607 Decreased By ▼ -61 (-1.3%)
BR30 20,274 Decreased By ▼ -618 (-2.96%)
KSE100 44,629 Decreased By ▼ -192 (-0.43%)
KSE30 17,456 Decreased By ▼ -66 (-0.38%)
COVID-19 TOTAL DAILY
CASES 1,265,047 663
DEATHS 28,280 11
Sindh 465,819 Cases
Punjab 437,974 Cases
Balochistan 33,128 Cases
Islamabad 106,469 Cases
KP 176,886 Cases

اسلام آباد:الیکشن کمیشن آف پاکستان نے چیئرمین نادرا کو جوابی خط لکھ دیا اور نادرا کے خط میں اختیار کئے گئے لہجے کو مایوس کن قرار دیتے ہوئے کہا کہ ایسا تاثر دیا گیاکہ الیکشن کمیشن نادرا کا ماتحت ادارہ ہے اور نادرا الیکشن کمیشن کو حکم دے رہا ہے، نئے معاہدے سے پہلے یہ بتایا جائے کہ سابق منصوبہ کیوں چھوڑا ؟۔

حکومت کے بعد نادرا اور الیکشن کمیشن میں بھی لفظی جنگ چھڑ گئی، نادرا کی جانب سے لکھے گئے خط میں الیکشن کمیشن نے مایوسی کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ نادرا نے جو لہجا اختیار کیا وہ مایوس کن ہے، ایسا تاثر ملتا ہے کہ الیکشن کمیشن نادرا کا ماتحت ادارہ ہے اور نادرا الیکشن کمیشن کو حکم دے رہا ہے۔

خط میں کہا گیا ہے انتخابات کے انعقاد کیلئے کسی نئے طریقہ کار پر عملدرآمد الیکشن کمیشن کی ذمہ داری ہے،نادرا الیکشن کمیشن سے آئی ووٹنگ کیلئے2.4ارب روپے کا نیا معاہدہ کرنا چاہتا ہے، نادرا پہلے بتائے کہ اس نے سابق منصوبہ کیوں چھوڑا، جس پر 6 کروڑ 65 لاکھ روپے خرچ ہو چکے تھے؟ اگر موجودہ نظام میں کوئی خامیاں تھی تو ا س کا ذمہ دار کون ہے، کیا کسی پر ذمہ داری کا تعین کیا گیا؟ ۔

واضح رہے کہ نادرا نے اپنے خط میں الیکشن کمیشن کو کہا تھا کہ وہ آئی ووٹنگ کے حوالے سے نادرا کے مجوزہ نظام پر مثبت پیش رفت کرے۔