Aaj TV News

BR100 4,607 Decreased By ▼ -61 (-1.3%)
BR30 20,274 Decreased By ▼ -618 (-2.96%)
KSE100 44,629 Decreased By ▼ -192 (-0.43%)
KSE30 17,456 Decreased By ▼ -66 (-0.38%)
COVID-19 TOTAL DAILY
CASES 1,265,650 603
DEATHS 28,300 20
Sindh 466,154 Cases
Punjab 438,133 Cases
Balochistan 33,133 Cases
Islamabad 106,504 Cases
KP 176,950 Cases

اسلام آباد: (رپورٹ: آصف نوید) ملکی دارالحکومت کے علاقے سیکٹر ای الیون میں نوجوان جوڑے پر تشدد اور وائرل ویڈیو کیس میں پولیس کی جانب سے عدالت میں جمع کرائے گئے چالان کے مندرجات سامنے آگئے ہیں۔

چالان کے مطابق مقدمے کے مبینہ مرکزی کردار عثمان ابرار نے ساتھیوں کے ساتھ ملکر نازیبا وڈیو بنائی، متاثرین کو بلیک میل کیا اور بعد میں بھتہ کی رقم بھی وصول کی۔

پولیس چالان میں بتایا گیا کہ ملزم کی نشاندہی پر ویڈیو بنانے والا موبائل فون اور ڈرانے کیلئے استعمال کیا گیا پستول برآمد کرلیا گیا ہے۔

چالان میں ملزم عمر بلال نے انکشاف کیا ہے کہ عثمان مرزا کے کہنے پر متاثرہ لڑکا، لڑکی سے سوا گیارہ لاکھ روپے لیے، چھ لاکھ روپے عثمان کو دیے اور باقی رقم دیگر ساتھیوں میں تقسیم کی گئی۔

متاثرہ لڑکا اور لڑکی کے مجسٹریٹ کے سامنے دفعہ 164 کے بیانات رکارڈ کرائے، متاثرین کے مجسٹریٹ کے سامنے ریکارڈ کرائے گئے بیانات کو بھی چالان کا حصہ بنایا گیا ہے۔

متاثرہ لڑکی نے بیان دیا تھا کہ عثمان اور اس کے دوست ہمارا مذاق اڑاتے او ویڈیو بناتے رہے۔

واقعہ کی ایف آئی آر 6 جولائی کو تھانہ گولڑہ میں درج کی گئی، جبکہ عدالت نے ملزمان پر فردجرم عائد کرنے کیلئے 28 ستمبر کی تاریخ مقرر کر رکھی ہے۔