Aaj TV News

BR100 4,381 Decreased By ▼ -20 (-0.46%)
BR30 16,863 Decreased By ▼ -630 (-3.6%)
KSE100 43,233 Decreased By ▼ -1 (-0%)
KSE30 16,718 Increased By ▲ 20 (0.12%)
COVID-19 TOTAL DAILY
CASES 1,286,825 372
DEATHS 28,767 6
Sindh 476,674 Cases
Punjab 443,453 Cases
Balochistan 33,506 Cases
Islamabad 107,887 Cases
KP 180,316 Cases

کراچی: اسٹیبلشمنٹ ڈویژن نے روٹیشن پالیسی 2020 پر عملدرآمد نہ کرنے پر 17 پولیس افسران کو نوٹس جاری کردیئے، 7 روز میں احکامات نہ ماننے پر کاروائی ہوگی۔

حکومت سندھ اور وفاق میں افسران کی روٹیشن پر تنازعہ مزید شدت اختیار کرگیا ہے۔

اسٹبلشمنٹ ڈویژن نےڈی آئی جی مسرور عالم، یونس چانڈیو، شہزاد اکبر،ڈی آئی جی عمر شاہد، ڈی آئی جی عبداللہ شیخ،ڈی جی آئی نعمان صدیقی، ثاقب اسماعیل، جاوید اکبر،ڈی آئی جی نعیم احمد، ڈی آئی جی مقصود احمد کو اظہارِ وجوہ کا نوٹس جاری کیاہے۔

ڈی آئی جی احمد ارسلان، ضعیم اقبال ،خرم علی،ڈی آئی جی انعام وحید، سہیل اختر، زبیر دریشک،ڈی آئی جی عبد الغفور شامل ہیں۔

افسران سے نوٹس میں 7روز میں جواب مانگا گیا ہے،اگر اسٹبلشمنٹ افسران کے جوابات پر مطمئن نہ ہوا تو افسران کیخلاف کارروائی کرے گی۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ سندھ حکومت افسران کے تبادلے رکوانا چاہتی ہے۔