Aaj.tv Logo

اسلام آباد: گورنر اسٹیٹ بینک رضا باقر کو ملنے والی تنخواہ اور مراعات کی تفصیلات منظر عام پر آگئیں۔

گورنر اسٹیٹ بینک کو ملنے والی تنخواہ کی تفصیلات سینیٹر عرفان صدیقی کی جانب سے پوچھے جانے والے سوال پر فراہم کی گئیں۔

وزارت خزانہ کی جانب سے دی جانے والے دستاویزات کے مطابق گورنر اسٹیٹ بینک رضا باقر کو ماہانہ 25 لاکھ روپے تنخواہ ملتی ہے جبکہ سالانہ 10 فیصد اضافہ کیا جاتا ہے۔

دستاویزات میں مزید بتایا گیا ہے کہ رضا باقر کو فرنشڈ گھر کے ساتھ ہی اس کے برابر کرایہ اور مرمتی سہولیات فراہم کی جاتی ہیں۔

گورنر اسٹیٹ بینک کے پاس ڈرائیور سمیت 2 گاڑیاں ہیں جب کہ 600 لیٹر پیٹرول دیا جاتا ہے۔

اس کے علاوہ بجلی، گیس، پانی اور جنریٹر کے اخراجات فراہم کرنے کے ساتھ ہی بچوں کی 75 فیصد فیس ادا کی جاتی ہے۔

گورنر اسٹیٹ بینک رضا باقر کو مفت لینڈ لائن، موبائل فونز اور انٹرنیٹ کی سہولت بھی حاصل ہیں۔

وزارت خزانہ کے مطابق گورنر اسٹیٹ بینک 4 ملازمین رکھ سکتے ہیں جبکہ ہر ملازم کی تنخواہ 18 ہزار روپے ماہانہ ہے۔

مزید سہولیات میں گورنر کو 24 گھنٹے سکیورٹی کے ساتھ ہی جن میں سکیورٹی گارڈز کی سہولت بھی شامل ہے جبکہ مکمل علاج کی سہولت بھی دی جاتی ہے۔

چھٹیوں کی بات کی جائے تو گورنر اسٹیٹ بینک کو ہر ماہ 3دن چھٹی کی سہولت حاصل ہےجبکہ ان کی گریجویٹی ایک ماہ کی تنخواہ سالانہ ہے۔

گورنر اسٹیٹ بینک کو ٹرانسفر کے لیے خاندان سمیت ائیر ٹکٹ اور سامان منتقلی کی مکمل سہولیات فراہم کی جاتی ہیں اور کلب کی ماہانہ چارجز سمیت سہولت حاصل ہے۔