Aaj TV News

BR100 4,668 Increased By ▲ 50 (1.09%)
BR30 20,892 Increased By ▲ 107 (0.52%)
KSE100 44,822 Increased By ▲ 488 (1.1%)
KSE30 17,521 Increased By ▲ 178 (1.03%)
COVID-19 TOTAL DAILY
CASES 1,264,384 720
DEATHS 28,269 17
Sindh 465,486 Cases
Punjab 437,793 Cases
Balochistan 33,120 Cases
Islamabad 106,445 Cases
KP 176,774 Cases

الیکشن کمیشن میں سینیٹر فیصل واوڈا کے خلاف نااہلی کی درخواستوں پر سماعت کی تاہم فیصل واوڈا کو کیس میں التوا کی درخواست پر11نومبر تک ریلیف مل گیا۔

الیکشن کمیشن میں سینیٹر فیصل واوڈا کے خلاف نااہلی کی درخواستوں پر سماعت ہوئی ۔

سینیٹر فیصل واوڈا کے نمائندے الیکشن کمیشن کے سامنے پیش ہوئے، اورکیس کے التواء کی درخواست کی۔

فیصل واوڈا کے نمائندے نے کمیشن کو بتایا کہ ہمارے وکیل معید کو کورونا ہے اوردوسرے وکیل کے ہاتھ کی سرجری ہوئی ہے۔

ان کا مزید کہنا تھا کہ کیس میں چارسے پانچ ہفتے کا التواء دیں ۔

جس پرکمیشن نے کہا کیس پہلے ہی بہت التواء کا شکار ہے،الیکشن کمیشن نے درخواستگزار دوست علی کو کیس میں فریق نہ بنانے کی فیصل واوڈا کی درخواست مسترد کرتے ہوئے کیس کی سماعت 11 نومبر تک ملتوی کر دی ۔

فیصل واوڈا کا بیان حلفی جھوٹا قرار

اس سے پہلے فیصل واؤڈ نا اہلی کیس میں اسلام آباد ہائیکورٹ نے فیصل واوڈا کے بیان حلفی کو جھوٹا قرار دے دیا۔ فیصلے میں کہا گیا ہے کہ فیصل واوڈا اسمبلی کے رکن نہیں رہے اسلئے نااہل نہیں قرار دیا جاسکتا تاہم الیکشن کمیشن ان کے جھوٹے بیان حلفی پر اپنا فیصلہ کرے۔

پہلے وفاقی وزیر فیصل واوڈا اپنے عہدے سے مستعفی ہوگئے ، اسلام آباد ہائیکورٹ میں استعفی جمع کروا دیا ، استعفی قومی اسمبلی سیکرٹریٹ کو بھی موصول ، جسٹس عامر فاروق نے کہاکہ سپریم کورٹ اپنے فیصلے میں کہہ چکی کہ جھوٹا بیان حلفی جمع کرانے کے اپنے نتائج ہوںگے، عدالت نے 2018 الیکشن شیڈول طلب کرتے ہوئے فیصلہ محفوظ کرلیا۔۔۔

سماعت میں وکیل نے بتایاتھا کہ فیصل واؤڈا نے بطور رکن قومی اسمبلی استعفی دے دیا، اس لیے پٹیشن غیر موثر ہو گئی ہے۔

وکیل درخواست گزار نے کہاکہ فیصل واؤڈا نے سینیٹ انتخابات میں ووٹ کاسٹ کیا ہے، استعفی کب دیا پتا نہیں، اسپیکر کی جانب سے استعفی کی مںظوری تک متعلقہ شخص رکن قومی اسمبلی ہی ہوتا ہے ،

الیکشن کمیشن ریکارڈ سے واضح ہے کہ فیصل واؤڈا کاغذات نامزدگی کی منظوری تک امریکی شہری تھے، اٹھارہ جون کو سکروٹنی مکمل ہوئی، 25 جون کو شہریت ترک کی، نا اہلی سے بچنے کیلئے فیصل ووڈا مستعفی ہوئے، نمائندہ الیکشن کمیشن نے بتایاکہ کمیشن میں بھی جھوٹے بیان حلفی پر فیصل واؤڈا کو نااہل قراردینے کا معاملہ زیرالتوا ہے،