Aaj.tv Logo

لاہور:انٹرنیشنل کرکٹ کونسل (آئی سی سی) پاکستان کے وکٹ کیپر بلے باز محمد رضوان اور فاسٹ بولر شاہین شاہ آفریدی "گار فیلڈ سوبرز ٹرافی "کیلئے نامزد کردیا۔

آئی سی سی کی جانب سے آئی سی سی پلیئر آف دی ایئر سر گارفیلڈ سوبرز ٹرافی کیلئے 2پاکستانی کھلاڑیوں سمیت 4کھلاڑیوں کو نامز کیا گیا ہے۔

پاکستان کے محمد رضوان اور شاہین شاہ آفریدی، کیوی کپتان کین ولیمسن اور انگلینڈ کے ٹیسٹ کپتان جو روٹ کو اس ایوارڈ کیلئے نامزد کیا گیا ہے۔

محمد رضوان

محمد رضوان 44 بین الاقوامی میچز میں 56.32 کی اوسط سے 2 سنچریوں کے ساتھ 1915 رنز بناکر نامزد ہوئے ہیں۔

پاکستان کے وکٹ کیپر بلے باز نے 2021 میں ٹی 20 کرکٹ میں راج کیا ہے،وہ رواں برس ٹی 20 انٹرنیشنل میں ایک ہزار سے زائد رنز بنانے والے واحد بلے بازبن گئے ہیں۔

محمد رضوان نے 29 میچز کی 26 اننگز میں 73.66 کی اوسط اور 134.89 کے اسٹرائیک ریٹ سے 1326 رنز بنائے تھے۔

رضوان نے ٹیسٹ کرکٹ میں بھی اپنے کھیل کو بہتر کیا اور 9 میچز میں 45.50 کی اوسط سے 455 رنز بنائے۔ ٹی ٹوئنٹی ورلڈکپ میں بھارت کخلا ف ناقابل شکست اننگز ان کے سال کی بہترین اننگز ہے۔

شاہین شاہ آفریدی

شاہین شاہ آفریدی نے 36 بین الاقوامی میچز میں 22.20 کی اوسط سے 78 وکٹیں حاصل کیں ،51 رنز کے عوض 6 وکٹیں ان کا بہترین بالنگ فیگرہے۔

شاہین شاہ آفریدی نے کھیل کے تینوں فارمیٹس میں بہترین بلے بازوں کو پچھاڑ ا،خاص طور پر ٹیسٹ اور ٹی 20میں ان کی پرفارمنسز یادگار رہیں۔

ٹی 20 ورلڈکپ میں بھارت کیخلاف بالنگ کو ان کا سال کا بہترین بالنگ اسپیل قرار دیا گیاہے۔

فاسٹ بولر نے رواں برس مختصر ترین فارمیٹ پر راج کیا اور 21 میچز میں 23 شکار کیے جن میں ورلڈکپ کے 6 میچز میں 7 وکٹیں بھی شامل ہیں۔

شاہین شاہ آفریدی نے 9 ٹیسٹ میچز میں 17.06 کی اوسط سے 47 وکٹیں حاصل کیں۔

جو روٹ

انگلش ٹیسٹ کپتان جو روٹ کو 18 بین الاقوامی میچز میں 58.37 کی اوسط سے 6 سنچریوں کی مدد سے 1855 رنز بنانے پر ایوارڈ کیلئے نامزد کیا گیا۔

جو روٹ رواں برس ٹیسٹ کیلنڈر ایئر میں محمد یوسف کا 2006 میں قائم کردہ سب سے زیادہ رنز کا ریکارڈ توڑنے میں ناکام رہے تاہم وہ 1708 رنز بناکر محمد یوسف اور ویوین رچرڈز کے بعد ٹیسٹ کیلنڈڑ ایئر میں 1700 سے زائد رنز بنانے والے تیسرے کھلاڑی بن گئے۔

جو روٹ رواں برس دو ڈبل سنچریز بنانے والے واحد بلے باز ہیں،انہوں نے سال کے آغاز میں سری لنکا کیخلاف 228 رنز اور اس کی اگلی سیریز میں بھارت کخلا ف 218 رنز کی اننگز کھیلی تھی۔

کین ولیمسن

کیوی کپتان کین ولیمسن نے 16بین الاقوامی میچز میں ایک سنچری کے ساتھ 43.31 کی اوسط سے 693 رنز بنائے ہیں۔

کین ولیمسن کی نامزدگی 2021 میں صرف ان کے بنائے ہوئے رنز کی بنیاد پر نہیں کی گئی بلکہ ان کی بااثر قیادت کو بھی پرکھا گیا ہے جس کی بدولت نیوزی لینڈ ٹیم نے پہلی ورلڈ ٹیسٹ چیمپئن شپ کے فائنل میں بھارت کو شکست دے کر اعزاز اپنے نام کیا۔

اس کے علاوہ ان کی کپتانی میں کیوی ٹیم نے ٹی 20ورلڈکپ 2021 کے فائنل میں بھی رسائی حاصل کی تاہم صرف 43 گیندوں پر 85 رنز کی ان کی جارحانہ اننگز بھی ٹیم کو شکست سے نہ بچا سکی۔