Aaj News

عمران خان کا سپریم کورٹ سے گورنر پنجاب کی برطرفی پر ازخود نوٹس کا مطالبہ

تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان نے بیرونی سازش سے مسلط شدہ امپورٹڈ حکومت کی دستور شکنی کی شدید مذمت کرتے ہوئے سپریم کورٹ سے پنجاب میں آئین و قانون کی کھلی توہین کے فوری نوٹس کا مطالبہ کردیا۔
اپ ڈیٹ 10 مئ 2022 01:19pm

اسلام آباد: سابق وزیراعظم عمران خان نے سپریم کورٹ سے گورنر پنجاب کی برطرفی پر ازخود نوٹس لینے کا مطالبہ کردیا اور کہا کہ گورنرپنجاب کونہایت شرمناک طریقے سے ہٹایا گیا۔

پاکستان تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان نے بیرونی سازش سے مسلط شدہ امپورٹڈ حکومت کی دستور شکنی کی شدید مذمت کرتے ہوئے سپریم کورٹ سے پنجاب میں آئین و قانون کی کھلی توہین کے فوری نوٹس کا مطالبہ کردیا۔

عمران خان نے اپنے بیان میں کہا کہ امپورٹڈ کٹھ پتلیاں پنجاب میں آئینی انارکی و فساد کو ہوا دے رہی ہیں ،امپورٹڈ حکومت کی جانب سے پاکستان کے سب سے بڑے صوبے پنجاب میں سنگین نوعیت کا آئینی بحران پیدا کردیا گیا ۔

چیئرمین پی ٹی آئی نے کہا کہ پہلے گھوسٹ انتخاب کے ذریعے ایک مجرم کٹھ پتلی بطور وزیراعلیٰ صوبے پر مسلط کیا گیا،اب تمام دستوری تقاضے بالائے طاق رکھتے ہوئے صدر کے منصب کی توہین کی گئی ہے ،گورنر پنجاب کو دستور کے تحفظ پر اصرار کے باعث نہایت شرمناک طریقے سے ہٹانے کی کوشش کی گئی۔

سابق وزیراعظم عمران خان کا مزید کہنا تھا کہ پنجاب میں اس کھلی دستورشکنی کا خاموشی سے تماشا دیکھا جارہاہے، لازم ہے کہ عدالتِ عظمیٰ صورتحال کی نزاکت کے پیشِ نظر معاملے کا ازخود نوٹس لے ، پنجاب میں ضمیر فروشوں کا معاملہ بھی بلاتاخیرانجام تک پہنچایا جائے۔

Supreme Court

اسلام آباد

imran khan

governor punjab

umer sarfaraz cheema

Comments are closed on this story.